ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں کشمیر کے کیرن سیکٹر میں پاکستانی فوج نے کی فائربندی معاہدے کی خلاف ورزی: دیکھیں ویڈیو

گولہ باری اس قدر شدید تھی کہ پہلی بار ضلع صدر مقام کے نزدیک والے علاقے ملک پورہ ، پزگام، چگٹیال، گزریال سمیت درجنوں علاقوں میں اس کی آوازیں سنائی دیں۔۔جگٹیال ہیہمامہ میں ایک گولہ رہائشی علاقہ میں گرا ۔ اس کے کے نتیجے میں کئی رہائش مکانوں کو نقصان پہنچا ۔ پوری آبادی گولہ باری کی وجہ سے خوف میں مبتلا ہوگئی۔

  • Share this:

کپواڑہ ضلع کے کیرن سیکٹر میں لائن آف کنٹرول کے نزدیک مختلف مقامات پر پاکستان کی جانب سے بلا اشتعال گولہ باری کی گئی۔ اس کے بعد پاکستان اور ہندوستان کے طرف سے زبردست گولہ باری ہوئی۔ گولہ باری اس قدر شدید تھی کہ پہلی بار ضلع صدر مقام کے نزدیک والے علاقے ملک پورہ ، پزگام، چگٹیال، گزریال سمیت درجنوں علاقوں میں اس کی آوازیں سنائی دیں۔۔جگٹیال ہیہمامہ میں ایک گولہ رہائشی علاقہ میں گرا ۔ اس کے کے نتیجے میں کئی رہائش مکانوں کو نقصان پہنچا ۔ پوری آبادی گولہ باری کی وجہ سے خوف میں مبتلا ہوگئی۔


وہیں دنیا بھر میں چھائے کوروناوائرس (Coronavirus) کے بحران کے درمیان بھی پاکستان (Pakistan)  اپنی ناپاک حرکتوں سے باز نہیں آرہا ہے۔ پاکستان کی جانب سے مسلسل سیزفائر کی خلاف ورزئ کی جارہی ہے۔ جمعرات کو بھی پاکستان کی جانب سے جموں۔کشمیر کے پونچھ سیکٹر لائن آف کنٹرول  (LoC)  کے پاس بھاری گولی باری کی گئی ہے۔ یہاں پاکستانی فوج نے مارٹار بھی داغے۔


بتادیں کہ 3 اپریل کو بھی جموں۔کشمیر کے راجوری اور پونچھ اضلاع میں جمعے کو لائن آف کنٹرول پر پاکستانی فوجیوں کی جانب سے گولی باری گئی تھی۔

اس میں 6 سکیورٹی اہلکار زخمی ہوگئے تھے۔ ہندستان کی جانب سے پاکستان کو گولی باری کا کرارا جواب دیا گیا تھا۔ افسران نے بتایا تھا کہ راجوری ضلع کے سندر بانی سیکٹر میں 3 اپریل کو علی الصبح پاکستانی فوج نے بغیر اکساوے کے مورٹار داغے جس سے گشتی پر گئے 6 سکیورٹی اہلکار زخمی ہوگئے تھے۔ اس کے بعد ہندستانی جوانوں نے منھ توڑ جواب دیا تھا۔
First published: Apr 10, 2020 07:57 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading