ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

پلوامہ حملے کے 6 دن بعد ایف آئی آر درج، این آئی اے نے جیش محمد اور مسعود اظہر کا نام کیا شامل

واضح ہو کہ 14 فروری کو پلوامہ میں سی آرپی ایف کے قافلے پر فدائین حملہ ہوا تھا۔ اس میں 40 جوان شہید ہو گئے تھے۔ جیش محمد نے ایک ویڈیو جاری کر کے اس حملے کی ذمہ داری لی تھی۔

  • Share this:
پلوامہ حملے کے 6 دن بعد ایف آئی آر درج، این آئی اے نے جیش محمد اور مسعود اظہر کا نام کیا شامل
پلوامہ دہشت گردانہ حملہ

جموں۔کشمیر کے پلوامہ میں سی آر پی ایف  کے قافلے پر ہوئے دہشت گردانہ حملے کی قومی جانچ ایجنسی (این آئی اے) جانچ کر رہی ہے۔ حملے کے 6 دن بعد این آئی اے نے ایف آئی آر درج کی ہے۔ ایف آئی آر میں دہشت گرد تنظیم جیش محمد اور اس کے سرغنہ مسعود اظہر کا نام بھی شامل کیاہے۔


واضح ہو کہ 14 فروری کو پلوامہ میں سی آرپی ایف کے قافلے پر فدائین حملہ ہوا تھا۔ اس میں 40 جوان شہید ہو گئے تھے۔ جیش محمد نے ایک ویڈیو جاری کر کے اس حملے کی ذمہ داری لی تھی۔ اس حملے کے بعد ہندستان۔پاکستان کے درمیان رشتہ میں کشیدگی پیدا ہو گئی ہے۔

انگریزی اخبر 'ٹائمس آف انڈیا' کی ایک خبر کے مطابق شروعاتی جانچ میں این آئی اے کو اس بات کے کافی ثبوت ملے ہیں کہ اس حملے میں جیش سرغنہ مسعود اظہر کا ہاتھ ہے۔ اس نے پاکستان میں بیٹھ کر اس حملے کی سازش رچی ہے۔

First published: Feb 21, 2019 11:07 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading