ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

جے این یو تنازعہ: پینل نےعمرخالد اورکنہیا کمارکی سزا رکھی برقرار

نئی دہلی: جے این کی اعلیٰ سطحی جانچ کمیٹی نے یونیورسٹی احاطے میں 9 فروری 2016 کے واقعہ کے معاملے میں عمر خالد کے اخراج اور کنہیا کمار پر لگائے گئے 10000 ہزار روپئے کے جرمانے کی سزا کو برقرار رکھا ہے۔

  • Share this:
جے این یو تنازعہ: پینل نےعمرخالد اورکنہیا کمارکی سزا رکھی برقرار
نئی دہلی: جے این کی اعلیٰ سطحی جانچ کمیٹی نے یونیورسٹی احاطے میں 9 فروری 2016 کے واقعہ کے معاملے میں عمر خالد کے اخراج اور کنہیا کمار پر لگائے گئے 10000 ہزار روپئے کے جرمانے کی سزا کو برقرار رکھا ہے۔

نئی دہلی: جے این کی اعلیٰ سطحی جانچ کمیٹی نے یونیورسٹی احاطے میں 9 فروری 2016 کے واقعہ کے معاملے میں عمر خالد کے اخراج اور کنہیا کمار پر لگائے گئے 10000 ہزار روپئے کے جرمانے کی سزا کو برقرار رکھا ہے۔


جے این یو پینل نے افضل گرو کو پھانسی دینے کے خلاف احاطے میں منعقدہ ایک پروگرام کے معاملے 2016 میں عمر خالد اور دیگر دو طلبا کے اخراج اور طلبہ یونین کے اس وقت کے صدر کنہیا کمار پر 10 ہزار روپئے کا جرمانہ عائد کیا تھا۔ اس دن مبینہ طور پر ملک مخالف نعرے بازی ہوئی تھی۔


پانچ رکنی پینل نے نظم و ضبط کے خلاف ورزی کے لئے 13 دیگر طلبا پر جرمانہ بھی عائد کیا تھا۔ اس کے بعد طلبا نے دہلی ہائی کورٹ کا رخ کیا تھا۔ عدالت نے یونیورسٹی کو پینل کے فیصلے کے جائزہ کے لئے ایل اپیلٹ اتھارٹی کے سامنے رکھنے کا حکم دیا تھا۔


ذرائع کے مطابق عمر خالد اور کنہیا کمار کے معاملے میں پینل نے اپنا فیصلہ برقرار رکھا۔ ایک ذرائع نے بتایا کہ آشوتوش کمار جیسے کچھ طلبا کے جرمانہ رقم کم کردی گئی ہے۔ اب انہیں جرمانے کی رقم ادا کرنی ہوگی اور وہ ہاسٹل میں رہ سکتے ہیں۔ ان میں سے کچھ اب جے این یو کے طالب علم نہیں ہیں، اس لئے سزا ان پر نافذ نہیں ہوگی۔

متنازعہ پروگرام کے معاملے میں ملک مخالف الزامات پر فروری 2016 میں کنہیا کمار، عمر خان اور انربان بھٹا چاریہ کو گرفتار کیا گیا تھا اور ابھی وہ ضمانت پر ہیں۔ ان کی گرفتاری پر چوطرفہ احتجاج بھی ہوا تھا۔

 
First published: Jul 05, 2018 09:25 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading