ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

ایک لاکھ میں فروخت کرتا تھا یہ صحافی دہلی اسمبلی کا اسٹیکر، گرفتار

نئی دہلی : دہلی پولیس کی کرائم برانچ نے ایک صحافی اور دہلی اسمبلی کے سکریٹری کے ڈرائیور کو گرفتار کیا ہے۔

  • Agencies
  • Last Updated: Jun 24, 2016 06:28 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
ایک لاکھ میں فروخت کرتا تھا یہ صحافی دہلی اسمبلی کا اسٹیکر، گرفتار
نئی دہلی : دہلی پولیس کی کرائم برانچ نے ایک صحافی اور دہلی اسمبلی کے سکریٹری کے ڈرائیور کو گرفتار کیا ہے۔

نئی دہلی : دہلی پولیس کی کرائم برانچ نے ایک صحافی اور دہلی اسمبلی کے سکریٹری کے ڈرائیور کو گرفتار کیا ہے۔ ان کے پاس سے دہلی اسمبلی کے کئی اسٹیکر، وزیر اعلی آفس کی فائلیں، اسمبلی کے پاس اور چوری کی گاڑی برآمد کی گئی ہے۔

بتایا جا رہا ہے کہ یہ دہلی اسمبلی کے اسٹیکرز کو 50 لاکھ سے ایک لاکھ روپے میں بیچتے تھے اور خود بھی چوری کی گاڑی پر اسمبلی کے اسٹیکر لگا کر گھومتے تھے ۔ ان کے پاس سے جو چوری کی گاڑی ملی ہے ، وہ ویگن آر ہے اور یہ اسے چار سال سے چلا رہے تھے۔ کرائم برانچ نے جس صحافی کو پکڑا ہے ، اس کا نام ونود بنسل ہے اور یہ روہنی کے اونتكا میں رہتا ہے۔ اس کا خود کا ایک اخبار ہے ۔

یہ خود کو ٹی وی صحافی بتا کر لوگوں کو چونا لگاتا تھا۔ اس کے ساتھ دوسرا شخص دہلی اسمبلی کے سکریٹری لال منی کا ڈرائیور ہے ، جو براڑی کا رہنے والا ہے۔ اس کام کو یہ دونوں مل کر انجام دیتے تھے۔ اسٹیكروں میں ایم ایل اے اسٹیکرس ، متعدد خالی لیٹر پیڈ، پارکنگ اسٹیکرز، اسمبلی میں انٹری کے کئی پاس ملے ہیں۔ ان میں سے کتنے اصلی ہیں اور کتنے جعلی یہ جانچ کا موضوع ہے۔ یہ لوگ پچاس ہزار سے ایک لاکھ روپے میں اسٹیکرز فروخت کرتے تھے۔ دہلی پولیس کی کرائم برانچ اس معاملے جانچ کر رہی ہے۔

First published: Jun 24, 2016 06:27 PM IST