உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جے این یو تنازع : غداری کیس میں کنہیا، انربان اور عمر خالد کو ملی بڑی راحت

    کنہیا کمار، فائل فوٹو

    کنہیا کمار، فائل فوٹو

    دہلی کی ایک عدالت نے فروری میں جے این یو کیمپس میں مبینہ طورپر ہندوستان مخالف نعرے بازی سے وابستہ غداری کے کیس میں جے این یو طلبہ یونین کے صدر کنہیا کمار اور دو دیگر طالب علموں کو باقاعدہ ضمانت دے دی ۔ کورٹ نے کہا کہ انہیں راحت نہ دینے کی کوئی بنیاد نہیں ہے

    • Pradesh18
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی : دہلی کی ایک عدالت نے فروری میں جے این یو کیمپس میں مبینہ طورپر ہندوستان مخالف نعرے بازی سے وابستہ غداری کے کیس  میں جے این یو طلبہ یونین کے صدر کنہیا کمار اور دو دیگر طالب علموں کو باقاعدہ ضمانت دے دی ۔ کورٹ نے کہا کہ انہیں راحت نہ دینے کی کوئی بنیاد نہیں ہے ۔

      اس سے قبل دہلی پولیس نے عدالت کو بتایا کہ کنہیا اور دو دیگر طالب علم عمر خالد اور انربان بھٹاچاریہ نے عبوری ضمانت کی شرائط کی خلاف ورزی نہیں کی اور جانچ میں تعاون کیا ۔ ایڈیشنل سیشن جج رتیش ​​سنگھ نے اپنے حکم میں کہا کہ اس حقیقت پر غور کرتے ہوئے کہ یہ تین ملزم عبوری ضمانت پر ہیں اور جب اور جہاں بھی کہا جاتا ہے، وہ جانچ میں شامل ہوئے ، میں ان تمام ملزمان کنہیا کمار، عمر خالد اور انربان بھٹاچاریہ کی انہی شرائط پر باقاعدہ ضمانت منظور کرتا ہوں ، جن پر عبوری ضمانت دی گئی تھی  ۔
      First published: