ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

اترپردیش میں کانوڑ یاترا رد ، کورونا کے پیش نظر کیا گیا فیصلہ

UP Kanwar Yatra Cancel: اتراکھنڈ اور راجستھان کے بعد اب اترپردیش میں بھی اس سال کانوڑ یاترا نہیں ہوگی ۔ کورونا انفیکشن کے بڑھتے خطرے کے پیش نظر کانوڑ یاترا کو منسوخ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔

  • Share this:
اترپردیش میں کانوڑ یاترا رد ، کورونا کے پیش نظر کیا گیا فیصلہ
اترپردیش میں کانوڑ یاترا رد ، کورونا کے پیش نظر کیا گیا فیصلہ

لکھنؤ : اتراکھنڈ اور راجستھان کے بعد اب اترپردیش میں بھی اس سال کانوڑ یاترا نہیں ہوگی ۔ کورونا انفیکشن کے بڑھتے خطرے کے پیش نظر کانوڑ یاترا کو منسوخ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔ یوگی حکومت سے بات چیت کرنے کے بعد کانوڑ یونین نے یہ فیصلہ کیا ۔ یوپی حکومت نے اس سے قبل کانوڑ یاترا کی اجازت دے دی تھی ۔ تاہم پھر سپریم کورٹ نے حکومت کو اپنے فیصلے پر غور کرنے کیلئے کہا تھا ۔ وزیر اعلی کی ہدایت پر ایڈیشنل چیف سکریٹری ہوم اونیش اوستھی اور ڈی جی پی مکل گوئل کانوڑ یونینوں سے بات چیت کر رہے تھے ۔ اب کانوڑ یاترا منسوخ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔ اے سی ایس نونیت سہگل نے یہ جانکاری دی ہے ۔


واضح رہے کہ گزشتہ سال کانوڑ یونینوں نے حکومت کے ساتھ تبادلہ خیال کے بعد خود کانوڑ یاترا کو ملتوی کردی گئی تھی ۔ اس سال بھی حکومت نے کانوڑ یونینوں کے ساتھ تبادلہ خیال کے بعد فیصلہ کیا ہے ۔ تاہم اس بار یوپی سرکار کورونا پروٹوکول کے ذریعہ کانوڑ یاترا نکالنا چاہتی تھی ۔ ادھر اتراکھنڈ حکومت نے کانوڑ یاترا پر پابندی عائد کردی تھی اور باہر سے آنے والے کانوڑیوں کو داخلہ دینے سے انکار کردیا تھا ۔ ان سب باتوں کے  پیش نظر اب حکومت نے یہ فیصلہ کیا ہے۔


سپریم کورٹ نے لیا تھا نوٹس


اترپردیش حکومت نے اس سے قبل کانوڑ یاترا کی اجازت دے دی تھی ۔ اس کے بعد سپریم کورٹ نے خود ہی اس معاملہ پر نوٹس لیا اور حکومت کو نوٹس جاری کیا ۔ اس کے ساتھ ہی عدالت نے حکومت سے جواب داخل کرنے کیلئے کہا تھا۔

اسی دوران یوپی حکومت کی جانب سے عدالت میں پیش ہوتے ہوئے ایڈووکیٹ سی ایس ویدھ ناتھن نے کہا کہ ہم ایک علامتی یاترا چاہتے ہیں ۔ یوپی حکومت کے ذریعہ دائر حلف نامہ کو پڑھتے ہوئے ویدھ ناتھن نے کہا کہ اگر کوئی بھی یاترا کرنا چاہتا ہے تو اسے اجازت لینا ہوگی ۔ منفی آر ٹی پی سی آر ٹیسٹ ، مکمل طور پر ویکسینیٹڈ اور سماجی فاصلہ سمیت دیگر قوانین پر عمل کرنا ہوگا ۔

اس پر بینچ نے کہا کہ یا تو ہم حکم پاس کرسکتے ہیں یا آپ کو نظر ثانی کرنی چاہئے ۔ سپریم کورٹ نے کہا تھا کہ اتر پردیش حکومت پیر کو اپنے فیصلہ سے عدالت کو آگاہ کرے ۔ بصورت دیگر عدالت حکم پاس کردے گی ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Jul 17, 2021 11:25 PM IST