ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

احتجاجی مظاہروں کی لہر کو روکنے کیلئے کشمیر بھر میں کرفیو، موبائل سروس بھی معطل ، ریل خدمات ٹھپ

وادی کشمیر میں موبائیل انٹرنیٹ خدمات کے بعد موبائیل فون سروس بھی معطل کردی گئی ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Jul 15, 2016 01:18 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
احتجاجی مظاہروں کی لہر کو روکنے کیلئے کشمیر بھر میں کرفیو، موبائل سروس بھی معطل ، ریل خدمات ٹھپ
وادی کشمیر میں موبائیل انٹرنیٹ خدمات کے بعد موبائیل فون سروس بھی معطل کردی گئی ہے۔

سری نگر : وادی کشمیر میں 8 جولائی کو حزب المجاہدین (ایچ ایم) کے اعلیٰ ترین کمانڈر برہان وانی کی ہلاکت کے بعد بھڑک اٹھنے والے احتجاجی مظاہروں کے نہ تھمنے والے سلسلے پر قابو پانے اور نماز جمعہ کے بعدگذشتہ چھ دنوں کے دوران سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں ہلاک ہونے والے شہریوں کی غائبانہ نماز جنازہ ادا کرنے اور پرامن احتجاجی مظاہرے منظم کرنے سے متعلق علیحدگی پسند قیادت کی مشترکہ اپیل پر عمل درآمد کو روکنے کے لئے وادی بھر میں کرفیو نافذ کردیا گیا ہے۔

جنوبی کشمیر کے چار اضلاع اننت ناگ، پلوامہ، شوپیان اور کولگام اور گرمائی دارالحکومت سری نگر کے بیشتر حصوں میں گذشتہ چھ دنوں سے عائد کرفیو میں مزید سختی لائی گئی ہے۔ تاہم سرکاری ذرائع کا دعویٰ ہے کہ شمالی کشمیر کے ضلع بانڈی پورہ اور کپواڑہ کو کرفیو سے مستثنیٰ رکھا گیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ان دو اضلاع کو اگرچہ کرفیو سے مستثنیٰ رکھا ہے، تاہم ان میں نماز جمعہ کے بعد احتجاجی مظاہروں کو روکنے کے لئے سیکورٹی فورسز اور ریاستی پولیس کے اہلکاروں کی اضافی نفری تعینات کی گئی ہے۔

ادھر وادی کشمیر میں موبائیل انٹرنیٹ خدمات کے بعد موبائیل فون سروس بھی معطل کردی گئی ہے۔  جنوبی کشمیر کے چار اضلاع میں موبائیل انٹرنیٹ کے ساتھ ساتھ فون سروس کو بھی معطل کردیا گیا تھا ۔ دوسری جانب شمالی کشمیر کے بارہمولہ اور جموں خطہ کے بانہال کے درمیان چلنے والی ریل سروس آج ساتویں دن بھی معطل رہی۔ ریلوے ذرائع نے بتایا کہ وادی میں امن وامان کی بحالی کے بعد بھی ریل سروس کو بحال کرنے میں کچھ دن لگ سکتے ہیں کیونکہ اِن کا دعویٰ ہے کہ ریلوے ٹریک کو کچھ ایک مقامات پر نقصان پہنچایا گیا ہے۔

First published: Jul 15, 2016 01:17 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading