உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ہماچل: کنور میں چٹانوں کے کھسکنے سے حادثے میں 13 افراد ہلاک، ملبےمیں دبیں بس اور کاریں، ریسکیو آپریشن جاری

    Youtube Video

    وہیں وزیراعظم نریندر مودی اور امت شاہ نے ہماچل پردیش کے سی ایم جئے رام ٹھاکر سے بات چیت کی ہے۔ دونوں نے کننور حادثے کی تفصیلات حاصل کی ہیں۔ پی ایم مودی نے پی ایم نے ہرممکن مدد کا یقین دلایا ہے۔

    • Share this:
      ہماچل پردیش کے ضلع کنور میں نگل سری کے قریب شاہراہ پر چٹانوں کے کھسکنے سے چوبیس مسافروں سمیت کئی گاڑیاں ملبے میں دب گئیں ہیں جس کے نتیجے میں کم از کم تیرہ افراد ہلاک اور ساٹھ دیگر زخمی ہونے کا خدشہ ہے۔ عہدیداروں نے بتایا کہ ایس ڈی آر ایف اور این ڈی آر ایف کے یونٹ بچاؤ کے کاموں میں مصروف ہیں جو کہ پتھر گرنے سے رکاوٹ بنے ہوئے ہیں۔ راحت اور بچاؤ کا کام جاری ہے۔

      وزیر اعلیٰ جئے رام ٹھاکر نے کہا کہ ملبے کے نیچے ساٹھ افراد کے پھنسے ہونے کا خدشہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی اور مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے مرکز کی طرف سے ہر طرح کی مدد کی یقین دہانی کرائی ہے۔ ٹھاکر نے کہا کہ فوج نے بھی ہیلی کاپٹر کی تعیناتی سمیت مدد کی پیشکش کی ہے۔

      وہیں وزیراعظم نریندر مودی اور امت شاہ نے ہماچل پردیش کے سی ایم جئے رام ٹھاکر سے بات چیت کی ہے۔ دونوں نے کننور حادثے کی تفصیلات حاصل کی ہیں۔ پی ایم مودی نے پی ایم نے ہرممکن مدد کا یقین دلایا ہے۔

      واضح ہو کہ ہماچل پردیش کے کننور میں پہاڑ سے تودہ گرنے سے یہ بڑاحادثہ پیش آیا ہے۔ ملبےمیں بس اور کاریں دَبی ہوہئی ہیں جس کیلئے ریسکیو آپریشن جاری ہے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: