உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    یوپی حکومت اپنے وزراء اور MLA کے خلاف درج مقدمہ واپس لے گی، آخری مراحل میں ہے یہ کام

    یوپی حکومت کے ذرائع نے بتایا کہ اس سلسلے میں اسکریننگ کا کام جاری ہے۔ اسکریننگ کا عمل مکمل ہونے کے بعد یوپی حکومت اپنے وزراء اور ایم ایل اے کے خلاف درج تمام مقدمات واپس لے لے گی۔

    • Share this:
      اتر پردیش کی یوگی حکومت اب اپنے وزراء اور ایم ایل ایز کے خلاف درج مقدمات واپس لے گی۔ ذرائع کی مانیں تو یوپی حکومت کے وزراء اور ایم ایل اے کے خلاف درج مقدمات کو واپس لینے کا عمل جلد ہی شروع کیا جائے گا، کیونکہ سیاسی دشمنی کی وجہ سے درج مقدمات کی جانچ کا کام آخری مراحل میں ہے۔ آپ کو بتاتے چلیں کہ یوپی حکومت میں ایسے کئی وزیر ہیں جن کے خلاف ایسے کیس درج ہیں۔

      یوپی حکومت کے ذرائع نے بتایا کہ اس سلسلے میں اسکریننگ کا کام جاری ہے۔ اسکریننگ کا عمل مکمل ہونے کے بعد یوپی حکومت اپنے وزراء اور ایم ایل اے کے خلاف درج تمام مقدمات واپس لے لے گی۔ تاہم اس حوالے سے ابھی تک کوئی سرکاری تصدیق نہیں ہوئی ہے۔ ادھر یوپی حکومت کے اس اقدام کی تنقید بھی ہونے لگی ہے۔ سماج وادی پارٹی اور کانگریس نے حکومت کے اس فیصلے کو غلط اور غیر آئینی قرار دیا ہے۔

       

      نابالغ لڑکی کا اغوا کرکے کیا Rape، مذہب تبدیل نہ کرنے پر دی جان سے مارنے کی دھمکی

      خوشخبری! WhatsApp پر اب 2 دن تک delete کر سکیں گے کسی کو بھی بھیجا گیا میسیج

      سماج وادی پارٹی کے ترجمان انوراگ بھدوریا نے کہا کہ بی جے پی criminal tendency والے اپنے وزراء اور ایم ایل اے کو بچانے کی کوشش کر رہی ہے۔ انہوں نے نوئیڈا کے شریکانت تیاگی کا بھی حوالہ دیا اور کہا کہ گرینڈ اومیکس سوسائٹی میں جو کچھ ہوا وہ اسی کا نتیجہ ہے۔ وہیں کانگریس کے ترجمان انشو اوستھی نے بھی سماج وادی پارٹی کے لہجے کی بازگشت کرتے ہوئے کہا کہ یہ آئین کے خلاف ہے۔ حکومت کیسز کیسے واپس لے سکتی ہے؟ یہ عدلیہ کا معاملہ ہے۔ عدلیہ فیصلہ کرے گی کہ کوئی مجرم ہے یا نہیں۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: