உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سماجی لٹریسی سے ہی سماج میں لائی جاسکتی ہے تبدیلی: ماجکو فاونڈیشن

    ماجکو فاونڈیشن کے زیر اہتمام منعقدہ سیمینار میں مقررین نے تعلیم کے ساتھ ساتھ سماجی لٹریسی پر زیادہ زور دیا۔

    ماجکو فاونڈیشن کے زیر اہتمام منعقدہ سیمینار میں مقررین نے تعلیم کے ساتھ ساتھ سماجی لٹریسی پر زیادہ زور دیا۔

    ماجکو فاونڈیشن کے زیر اہتمام منعقدہ سیمینار میں مقررین نے تعلیم کے ساتھ ساتھ سماجی لٹریسی پر زیادہ زور دیا۔

    • Share this:
      تعلیم حاصل کرنا انتہائی ضروری ہے کیونکہ انسان تعلیم کے بغیر ادھورا ہے، لیکن آدمی کو انسان بننے کیلئے سماجی لٹریسی (سماجی خواندگی) بھی ضروری ہے۔ جب تک ہمارے اندر سماجی لٹریسی اور سمجھ بوجھ نہیں ہوگی، جب تک سماجی چیزوں کو نہیں سمجھا جاسکتا۔ ہمارا ماننا ہے کہ آدمی کو مکمل بنانے کیلئے تعلیم کے ساتھ ساتھ سماجی لٹریسی بہت ضروری ہے۔ ان خیالات کااظہار آل انڈیا مسلم مجلس مشاورت کے مرکزی دفتر میں ماجکو فائونڈیشن کے زیر اہتمام بعنوان: ’’سماجی لٹریسی کیا، کیوں اور کس کیلئیـ‘‘ منعقدہ سیمینار میں مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

      اس موقع پر جامعہ ملیہ اسلامیہ واقع یوجی سی سے منسلک پروفیسر انیس الرحمن، خورشید انصاری، جے این یو کی اسکالر امرتا پاٹھک، شاہنواز خان، ماجکو فائونڈیشن کے چیئرمین ماجد خان، ویلفیئر پارٹی کے دہلی پردیش صدر سراج طالب وغیرہ نے خطاب کیا۔ اس موقع پر خصوصی طور پر گریٹ انڈیا ویلفیئر فائونڈیشن کے چیئرمین نوراللہ خان، ارشاد خان، جاوید اشرف، جنید احمد فلاحی، زبیرسعیدی، عبدالحمید فلاحی سمیت بڑی تعداد میں لوگوں نے شرکت کی۔
      مقررین نے اپنے خطاب میں کہا کہ سماج کو خود آگے آنا ہوگا، کیونکہ ہماری خامیوں کو کوئی دوسرا ٹھیک کرنے نہیں آئے گا۔ جب تک ہم اپنی خامیوں کو دور کرنے کیلئے دوسروں کو ذمہ دار ٹھہراتے رہیں گے، تب تک ہم پیچھے جاتے رہیں گے۔ مقررین نے سماجی اصلاح پر زور دیتے ہوئے کہا کہ تعلیم حاصل کرنے کیلئے کتابوں کو پڑھنا پڑتا ہے، لیکن سماجی لٹریسی کیلئے سماج کو پڑھنا پڑتا ہے۔ اس لئے سماجی لٹریسی کیلئے بڑے پیمانے پر کام کرنے کی ضرورت ہے۔
      فائونڈیشن کے چیئرمین ماجد خان نے کہا کہ ہماری سب سے پہلے کوشش یہی ہے کہ اپنے اندر اورآس پاس کی چیزوں کو ٹھیک کیا جائے، اس کے بعد پھر دائرے کی توسیع کی جائے ۔ اگر ہم سب مل کر اپنے قریب اور آس پاس کی چیزوں کو ٹھیک کردیتے ہیں، تو پھر تمام مسائل حل ہوجائیں گے۔ سیمینار کے مقررین نے فائونڈیشن کے چیئرمین ماجد خان کے اقدامات کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ اگر اس طرح سے نوجوان طبقہ جب سماجی لٹریسی کیلئے کھڑا ہوجائے گا، تو پھر اصلاح ضرور ہوگا۔ اس طرح کے پروگرام سے ہمیں اپنی خامیوں کو دور کرنے کا موقع ملے گا۔ اس موقع پر مقررین نے ملک میں موب لنچنگ جیسے واقعات کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ سماجی لٹریسی سے شاید ممکن ہے، کہ اس طرح کے واقعات کو بھی ختم کیاجاسکتا ہے۔
      First published: