ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

راجیہ سبھا کا ہنگامہ خیز آغاز ، بی جے پی اور آر ایس ایس مردہ باد کے نعروں سے گونج اٹھا ایوان

نئی دہلی : جے این یو تنازع اور روہت ویمولا کی خودکشی پر بجٹ سیشن کا ہنگامہ خیز آغاز ہوگیا ہے۔ حکومت اور اپوزیشن پہلی بار آمنے سامنے ہیں۔ اس مسئلے پر پارلیمنٹ کے باہر اور اندر دونوں جگہ پر گھمسان ہے۔ جہاں پارلیمنٹ کے احاطے میں بایاں محاذ اور جے ڈی یو نے احتجاج کیا، وہیں کارروائی شروع ہوتے ہی اندر بھی گھمسان ​​مچ گیا۔

  • Pradesh18
  • Last Updated: Feb 24, 2016 11:34 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
راجیہ سبھا کا ہنگامہ خیز آغاز ، بی جے پی اور آر ایس ایس مردہ باد کے نعروں سے گونج اٹھا ایوان
نئی دہلی : جے این یو تنازع اور روہت ویمولا کی خودکشی پر بجٹ سیشن کا ہنگامہ خیز آغاز ہوگیا ہے۔ حکومت اور اپوزیشن پہلی بار آمنے سامنے ہیں۔ اس مسئلے پر پارلیمنٹ کے باہر اور اندر دونوں جگہ پر گھمسان ہے۔ جہاں پارلیمنٹ کے احاطے میں بایاں محاذ اور جے ڈی یو نے احتجاج کیا، وہیں کارروائی شروع ہوتے ہی اندر بھی گھمسان ​​مچ گیا۔

نئی دہلی : جے این یو تنازع اور روہت ویمولا کی خودکشی پر بجٹ سیشن کا ہنگامہ خیز آغاز ہوگیا ہے۔ حکومت اور اپوزیشن پہلی بار آمنے سامنے ہیں۔ اس مسئلے پر پارلیمنٹ کے باہر اور اندر دونوں جگہ پر گھمسان ہے۔ جہاں پارلیمنٹ کے احاطے میں بایاں محاذ اور جے ڈی یو نے احتجاج کیا، وہیں کارروائی شروع ہوتے ہی اندر بھی گھمسان ​​مچ گیا۔


راجیہ سبھا کی کارروائی شروع ہوتے ہی بہوجن سماج پارٹی سربراہ مایاوتی نے روہت ویمولا کا معاملہ اٹھاتے ہوئے مرکزی حکومت پر جم کر حملہ بولا۔ مایاوتی نے کہا کہ انتظامیہ نے امبیڈکر وادی روہت کا اتنا استحصال کیا کہ اس نے خود کشی کر لی۔ دلتوں کو ہراساں کیا جا رہا ہے۔ اس کے علاوہ راجیہ سبھا میں بی جے پی اور آر ایس ایس مردہ باد کے نعرے بھی خوب سننے کو ملے ۔


اپوزیشن پارٹیوں کے لیڈران جب خاموش نہیں ہوئے تو ایوان کی کارروائی کو 10 منٹ کیلئے ملتوی کیا گیا۔


 

First published: Feb 24, 2016 11:34 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading