ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

چھ ماہ سے بند مندر۔ مسجد میں چندے اور دان کی رقم حاصل نہ ہونے سے مندر۔ مسجد انتظامیہ کے سامنے پیدا ہوئی یہ مشکل

مذہبی اداروں اور عبادت گاہوں کے ذمہ داران کے مطابق گزشتہ چھ ماہ سے عبادت گاہوں کے بند ہونے کی وجہ سے ان کی آمدنی بھی بند ہو گئی ہے جس کے سبب مندر ٹرسٹ کے زیر انتظام کیے جانے والے سماجی کام اور اخراجات کو پورا کرنے میں بھی کافی مشکلات پیش آ رہی ہیں۔

  • Share this:
چھ ماہ سے بند مندر۔ مسجد میں چندے اور دان کی رقم حاصل نہ ہونے سے مندر۔ مسجد انتظامیہ کے سامنے پیدا ہوئی یہ مشکل
چندے اور دان کی رقم حاصل نہ ہونے سے مندر۔ مسجد انتظامیہ کے سامنے پیدا ہوئی یہ مشکل

میرٹھ ۔ یکم ستمبر سے انلاک چار کی شروعات ہو گئی ہے جس میں 21 ستمبر سے مذہبی تقریبات میں لوگوں کے شامل ہونے کی تعداد میں بھی رعایت دیتے ہوئے 100 لوگوں تک کے شامل ہونے کی اجازت دی گئی ہے لیکن اس تعلق سے مکمّل طور پر گائیڈ لائن جاری نہ کیے جانے سے مذہبی رہنماؤں میں بےچینی کا عالم ہے۔ خاص طور پر مندر، مسجد، گرجا اور گرودوارہ میں عبادت کے لیے آنے والے لوگوں کی تعداد کو لیکر کوئی واضح ہدایات جاری نہ ہونے سے ان عبادت گاہوں کے ذمہ داران پس وپیش کے عالم میں ہیں اور حکومت سے مذہبی اداروں کو بھی کھولے جانے کا مطالبہ کر رہے ہیں۔


وہیں مذہبی اداروں اور عبادت گاہوں کے ذمہ داران کے مطابق گزشتہ چھ ماہ سے عبادت گاہوں کے بند ہونے کی وجہ سے ان کی آمدنی بھی بند ہو گئی ہے جس کے سبب مندر ٹرسٹ کے زیر انتظام کیے جانے والے سماجی کام اور اخراجات کو پورا کرنے میں بھی کافی مشکلات پیش آ رہی ہیں۔ بابا منوہر ناتھ مندر کے پجاری پنڈت وشو ناتھ شاستری بتاتے ہیں کہ مندر کے رکھ رکھاؤ کے علاوہ پوجا پاٹھ سے لیکر پرساد تقسیم کرنے اور یہاں رہنے والوں کی دیکھ بھال کے لیے اخراجات مندر کو حاصل ہونی والی دان دکشینا سے پورے کیے جاتے ہیں۔ لیکن گزشتہ چھ ماہ سے مندر کے دروازے بند ہونے کی وجہ سے ٹرسٹ کی آمدنی بھی بند ہو گئی ہے جس کے سبب اخراجات کو پورا کرنا مشکل ہو رہا ہے۔ یہاں تک کہ مندر کی گاؤ شالا میں موجود چالیس گائے کے کھانے کے چارے کا انتظام کرنا بھی مشکل ہو رہا ہے۔


انلاک ایک سے لیکر چار تک کے دور میں بازار سے لیکر شراب خانوں تک کو کھولنے کی اجازت دی جا سکتی ہے تو بڑا سوال یہ ہے کہ کیا پھر عبادت گاہوں پر لگی پابندیوں میں رعایت نہیں دی جا سکتی ہے۔

Published by: Nadeem Ahmad
First published: Sep 03, 2020 10:37 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading