ہوم » نیوز » No Category

مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کے زیر اہتمام میرٹھ میں تحفظ حرمین شریفین کانفرنس کا انعقاد

نئی دہلی۔’’ اسلام دین امن وآشتی ہے ۔ کتاب وسنت میں اللہ کی وحدانیت کے بعد سب سے زیادہ انسانیت کے حقوق کی ادائیگی پر زور دیا گیا ہے۔

  • News18
  • Last Updated: Jan 11, 2016 08:38 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کے زیر اہتمام میرٹھ میں تحفظ حرمین شریفین کانفرنس کا انعقاد
نئی دہلی۔’’ اسلام دین امن وآشتی ہے ۔ کتاب وسنت میں اللہ کی وحدانیت کے بعد سب سے زیادہ انسانیت کے حقوق کی ادائیگی پر زور دیا گیا ہے۔

نئی دہلی۔’’ اسلام دین امن وآشتی ہے ۔ کتاب وسنت میں اللہ کی وحدانیت کے بعد سب سے زیادہ انسانیت کے حقوق کی ادائیگی پر زور دیا گیا ہے۔ ہمارا اس پر ایمان اور پختہ یقین ہے اور ہم اسے دنیا وآخرت میں ہر طرح کی کامیابی و سرخروئی کا واحد ذریعہ سمجھتے ہیں، امن وشانتی اور انسانیت نوازی کو ہر حال میں ضروری جانتے ہیں اور دہشت گردی کی تمام قسموں کو حرام اور ناسور گردانتے ہیں۔ وطن عزیز ہندوستان اور بیرون ملک ہر طرح کی داخلی و خارجی دہشت گردی کو کنڈم اور مذمت کرتے ہیں اسی بنیاد پر ہماری جمعیت نے ہندوستان میں سب سے پہلے دہشت گردی کے خلاف آواز اٹھائی ، فتوے شائع کئے، سمپوزیم ، سیمینار اور کانفرنسیں بڑے پیمانے پر منعقد کیں ۔ آج پھر ہم داعش اور دہشت گردی کی تمام قسموں کو کنڈم کرتے ہوئے ، سعودی عرب، و طن عزیز ہندوستان اور دنیا کے تمام گوشوں میں دہشت گردی اور اس کے مجرمین کے خلاف کارروائیوں اور سزائوں کو حق بجانب سمجھتے ہیں اور اس کے خلاف جانے والوں، دہشت گردوں کی پشت پناہی کرنے والوں اور اس کا بہانہ بنا کر فتنہ و فساد کا ایک نیا باب کھولنے والوں کی مذمت کرتے ہیں جیسا کہ تہران میں سعودی عرب کے سفارت خانے پر حملہ ہوا اور اس میں آگ لگانے کی واردات ہوئی ہے جو دینی اور بین الاقوامی قانون کی خلاف ورزی اور دوسرے ملک کے داخلی امور میں مداخلت ہے‘‘۔ ان خیالات کا اظہار مولانا اصغر علی امام مہدی سلفی ناظم عمومی مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند نے کیا۔ موصوف گزشتہ شب مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کے زیر اہتمام اور صوبائی جمعیت اہل حدیث مغربی یوپی کے زیر انتظام شیش گارڈن، نور نگر، میرٹھ ، یوپی میں منعقد عظیم الشان تحفظ حرمین شریفین کانفرنس میں ہزاروں کی تعداد میں موجود حاضرین کو ٹیلی فونک پیغام دے رہے تھے۔


انہوں نے کہا کہ مملکت انسانیت سعودی عرب میں جن دہشت گردوں کو پھانسی کی سزا دی گئی ہے ان میں سے چند ایک کے علاوہ جو حقیقت میں ان دہشت گردوں کے سر براہ رہے ہیں غالب اکثریت غیر شیعہ ہیں ۔ لہذا عدل اور انصاف اورعقل مندی اور ایمانداری کا تقاضہ ہے کہ تمام مسلمانوں اور سارے انسان اور تمام ممالک دہشت گردوں کے خلاف سعودی عرب وغیرہ کے اس طرح کے اقدامات کی حوصلہ افزائی کریں اور کسی بھی طرح کے فتنہ وفساد کرنے سے بچیں ۔ عالم اسلام سمیت تمام دنیا کو کسی بھی خرخشے اور ابتلاء وآزمائش میں مبتلا کرنے سے پرہیز کریں ۔ سعودی عرب میں شیعہ و سنی کی کوئی تفریق نہیں کی جاتی ہے۔ سب باہم شیر وشکر ہوکر رہتے ہیں اور تعلیم وترقی کے لیے سب کے لیے یکساں مواقع فراہم ہیں۔ ناظم عمومی نے اپنے پیغام میں صوبائی جمعیت اہل حدیث مغربی یوپی اور میرٹھ کے ذمہ داران و حاضرین کا کانفرنس کے حسن انعقاد و حسن انتظام پر شکریہ ادا کیا۔


صدر اجلاس جناب الحاج وکیل پرویز ناظم مالیات مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند نے کہا کہ مرکزی جمعیت اہل حدیث نے تاریخی شہر میرٹھ میں تحفظ حرمین شریفین کانفرنس منعقد کی ہے ۔ ان شاء اللہ اس کا پیغام پورے ملک میں عام ہوگا اورتحفظ حرمین شریفین کے حوالے سے پورے ملک میں بیداری پیدا ہوگی۔ ہم ہر طرح کی دہشت گردی اور دہشت گردوں کی حمایت کی مذمت کرتے ہیں۔

First published: Jan 11, 2016 08:34 PM IST