உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مودی کا "پردھان منتری اججولا یوجنا" اونٹ کے منہ میں زیرہ، کنکشن ہی نہیں،مفت میں گیس بھی دستیاب کرائی جائے: مایاوتی

    لکھنؤ۔  بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) کی صدر مایاوتی نے "پردھان منتری اججولا یوجنا" کو اونٹ کے منہ میں زیرہ قرار دیتے ہوئے آج کہا کہ اسکیم کے تحت صرف کنکشن ہی نہیں بلکہ مفت میں گیس بھی دستیاب کرائی جانی چاہئے۔

    لکھنؤ۔ بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) کی صدر مایاوتی نے "پردھان منتری اججولا یوجنا" کو اونٹ کے منہ میں زیرہ قرار دیتے ہوئے آج کہا کہ اسکیم کے تحت صرف کنکشن ہی نہیں بلکہ مفت میں گیس بھی دستیاب کرائی جانی چاہئے۔

    لکھنؤ۔ بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) کی صدر مایاوتی نے "پردھان منتری اججولا یوجنا" کو اونٹ کے منہ میں زیرہ قرار دیتے ہوئے آج کہا کہ اسکیم کے تحت صرف کنکشن ہی نہیں بلکہ مفت میں گیس بھی دستیاب کرائی جانی چاہئے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:

      لکھنؤ۔  بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) کی صدر مایاوتی نے "پردھان منتری اججولا یوجنا" کو اونٹ کے منہ میں زیرہ قرار دیتے ہوئے آج کہا کہ اسکیم کے تحت صرف کنکشن ہی نہیں بلکہ مفت میں گیس بھی دستیاب کرائی جانی چاہئے۔ محترمہ مایاوتی نے یہاں جاری بیان میں کہا کہ گیس عوام کی بنیادی ضرورتوں میں شامل ہے۔اسے سب کو دستیاب کرانے کے بجائے چند کروڑ کو ہی دے پانا، حکومت کی ناکامی ہی کہی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ اترپردیش کی آبادی تقریبا 22 کروڑ ہے۔ اس میں خط افلاس سے نیچے زندگی گزارنے والوں کی تعداد کافی ہے۔ ریاست کے صرف چند لاکھ غریبوں کو اس اسکیم کا فائدہ دیا جانا ناانصافی ہے۔


      بی ایس پی صدر نے کہا کہ گیس کے بجائے صرف کنکشن مفت دیا جانا غریبوں کے تئیں بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) حکومت کا مایوس کن اور دکھاوٹی رویہ ظاہر کرتا ہے۔ مسٹر مودی نے یکم مئی کو بلیا سے اججولا منصوبہ کی شروعات کی تھی۔ اسکیم کے تحت ملک کے پانچ کروڑ غریبوں کو تین سال میں مفت رسوئی گیس کنکشن، چولہا اور ریگولیٹر دیے جائیں گے ۔ محترمہ مایاوتی نے کہا کہ وزیر اعظم نے صرف اپنے پارلیمانی حلقہ وارانسی میں ای۔رکشہ تقسیم کرکے ریاست کے باقی 79 پارلیمانی حلقوں کے ساتھ امتیاز کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہی کام تو پہلے کانگریس قیادت بھی کرتی تھی۔ کانگریس کے دور حکومت میں رائے بریلی اور امیٹھی علاقے کو خاص درجہ حاصل رہتا تھا اور وہیں کے لوگ منصوبوں سے زیادہ تر فیض یاب ہوتے تھے۔سماج وادی پارٹی (ایس پی) بھی یہی کر رہی ہے۔ اسکیموں کے فوائد صرف سیفئی (اٹاوہ) کے لوگوں کو ہی مل رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مودی حکومت بھی کانگریس اور سماج وادی پارٹی کے نقش قدم پر چل رہی ہے۔ 


      انہوں نے مسٹر مودی کی جن دھن یوجنا کی افادیت پر سوال کھڑا کیا۔ انہوں نے کہا کہ ان کھاتوں میں جمع رقم کا استعمال غریبوں کے مفاد میں نہیں ہو رہا ہے۔ اسے بھی دھنناسیٹھوں اور سرمایہ داروں کو قرض دینے کیلئے استعمال کیا جا رہا ہے۔ حکومت ان کے اربوں کے قرض بھی معاف کرتی رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کسان فصل انشورنس منصوبہ کا فائدہ بھی کسانوں کو نہیں مل پا رہا ہے۔ خشک سالی سے کسانوں کو بچانے میں مرکز اور ریاستی حکومت دونوں ہی ناکام ہیں۔

      First published: