ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

لوگ مجھے دیوی کی طرح مانتے ہیں ، ان کا غصہ میں نہیں روک سکتی : مایاوتی

بی ایس پی سربراہ نے کہا کہ میں نے اس معاملہ پر مظاہرہ کے لئے نہیں کہا۔ بی جے پی لیڈر کا تبصرہ اتنا خراب تھا کہ معاشرے کے کمزور طبقے کے لوگوں خاص طور پر دلتوں نے خود ہی اس کی مخالفت کی۔ میں انہیں نہیں روک سکتی۔

  • Agencies
  • Last Updated: Jul 21, 2016 06:11 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
لوگ مجھے دیوی کی طرح مانتے ہیں ، ان کا غصہ میں نہیں روک سکتی : مایاوتی
بی ایس پی سربراہ نے کہا کہ میں نے اس معاملہ پر مظاہرہ کے لئے نہیں کہا۔ بی جے پی لیڈر کا تبصرہ اتنا خراب تھا کہ معاشرے کے کمزور طبقے کے لوگوں خاص طور پر دلتوں نے خود ہی اس کی مخالفت کی۔ میں انہیں نہیں روک سکتی۔

نئی دہلی :بی ایس پی کی صدر مایاوتی نے اپنے خلاف بی جے پی لیڈر دياشنكر سنگھ کے قابل اعتراض تبصرہ کی مخالفت میں جاری مظاہروں کے درمیان جمعرات کو راجیہ سبھا میں کہا کہ سماج کے کمزور طبقہ کے لوگ انہیں دیوی کے طور پر دیکھتے ہیں۔ اگر کوئی ان کی دیوی کے بارے میں غلط بولے گا ، تو وہ مخالفت ضرور کریں گے۔

مایاوتی نے کہا کہ سماج کے کمزور طبقہ کے لوگ پارٹی سیاست کی سطح سے اوپر اٹھ کر میری عزت کرتے ہیں۔ وہ مجھے دیوی کے طور پر دیکھتے ہیں۔ اگر آپ ان کی دیوی کے بارے میں کچھ غلط بولیں گے ، تو انہیں برا لگے گا اور وہ مجبورا مخالفت کریں گے۔

مایاوتی نے کہا کہ بی جے پی نے دياشنكر کو پارٹی سے نکال کر اچھا کام کیا، لیکن بہتر ہوتا کہ بی جے پی دياشنكر کے خلاف خود ہی ایف آئی آر درج کراتی۔ اس درمیان پارٹی نے دياشنكر کی گرفتاری کے لئے 36 گھنٹے کا الٹی میٹم دیا ہے۔

بی ایس پی سربراہ نے کہا کہ میں نے اس معاملہ پر مظاہرہ کے لئے نہیں کہا۔ بی جے پی لیڈر کا تبصرہ اتنا خراب تھا کہ معاشرے کے کمزور طبقے کے لوگوں خاص طور پر دلتوں نے خود ہی اس کی مخالفت کی۔ میں انہیں نہیں روک سکتی۔ لیکن میں نے انہیں یقین دلانا چاہتی ہوں کہ ان کے حقوق کے لئے لڑتی رہوں گی۔

قابل ذکر ہے کہ بی جے پی نے اس معاملہ ہر فضیحت کا سامنا کرنے کے بعد سنگھ کو چھ برسوں کے لئے پارٹی سے نکال دیا ہے ۔ پولیس نے اس معاملے میں سابق بی جے پی رہنما کے خلاف ایس سی / ایس ٹی ایکٹ کے تحت مقدمہ بھی درج کرلیا ہے۔ دیا شنکر سنگھ نے منگل کو کہا تھا کہ بی ایس پی سربراہ مایاوتی پیسہ لے کر ٹکٹ باٹتي ہیں اور اس معاملے میں ان کے خلاف قابل اعتراض تبصرہ کیا تھا۔

First published: Jul 21, 2016 06:10 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading