உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    اترپردیش اسمبلی انتخابات میں بی ایس پی کسی بھی پارٹی سے اتحاد نہیں کرے گی: مایاوتی

    نئی دہلی۔ بہوجن سماج پارٹی کی سربراہ مایاوتی نے یوپی انتخابات کے پیش نظر ایک بڑا بیان دیا ہے۔

    نئی دہلی۔ بہوجن سماج پارٹی کی سربراہ مایاوتی نے یوپی انتخابات کے پیش نظر ایک بڑا بیان دیا ہے۔

    نئی دہلی۔ بہوجن سماج پارٹی کی سربراہ مایاوتی نے یوپی انتخابات کے پیش نظر ایک بڑا بیان دیا ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی۔ بہوجن سماج پارٹی کی سربراہ مایاوتی نے یوپی انتخابات کے پیش نظر ایک بڑا بیان دیا ہے۔ مایاوتی نے کہا ہے کہ ان کی پارٹی کسی سے اتحاد نہیں کرے گی۔ یوپی-اتراکھنڈ میں بی ایس پی اکیلے الیکشن لڑے گی۔ مایاوتی نے کہا کہ یوپی میں بی ایس پی کانگریس کے ساتھ اتحاد نہیں کرے گی۔ ہم نے اتراکھنڈ میں حکومت بنانے کے لئے کانگریس کو حمایت دی تھی۔ ہم نے فرقہ وارانہ طاقتوں کو روکنے کے لئے حمایت کی تھی۔

      مایاوتی نے کہا کہ ہم نے اتراکھنڈ میں کانگریس کی جو حمایت کی ہے وہ انتخابات کے لئے نہیں تھی، صرف حکومت بنانے کے لئے تھی۔ ہم نہیں چاہتے ہیں کہ اس ملک میں فرقہ وارانہ طاقتیں مضبوط ہوں، اس لئے ہم نے کانگریس کو حمایت دی، لیکن اس کا مطلب یہ نہیں کہ ہم آنے والے انتخابات میں ان سے سمجھوتہ کریں گے۔

      ہم یوپی، اتراکھنڈ اور پنجاب میں آنے والے انتخابات میں اکیلے الیکشن لڑیں گے۔ اس سوال پر کہ کیا یوپی میں الیکشن کے بعد سمجھوتہ کریں گی، مایاوتی نے کہا کہ یوپی میں تو ہمیں اس کی ضرورت ہی نہیں پڑے گی۔ اتراکھنڈ میں ہماری پوزیشن بہتر ہوگی۔

      کل اتراکھنڈ اسمبلی میں طاقت آزمائی کے دوران ہریش راوت کو حمایت کا اعلان کر مایاوتی نے سیاسی سرگرمیوں کو بڑھا دیا تھا۔ اسے یوپی-اتراکھنڈ میں دونوں پارٹیوں کے درمیان سیاسی اتحاد کے اشارہ کے طور پر دیكھاجا رہا تھا، لیکن مایاوتی نے آج ایسی قیاس آرائیوں کو پوری طرح مسترد کر دیا۔
      First published: