உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    دادری سانحہ کیس میں نیا موڑ ، اخلاق کے گھر سے برآمد گوشت بیف تھا

    نئی دہلی پورے ملک کو ہلا کر رکھ دینے والے دادری سانحہ کی جانچ میں ایک نیا موڑ آ گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق محمد اخلاق کے گھر سے برآمد گوشت کی فارنسک جانچ میں بیف ہونے کی تصدیق کی گئی ہے ۔

    نئی دہلی پورے ملک کو ہلا کر رکھ دینے والے دادری سانحہ کی جانچ میں ایک نیا موڑ آ گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق محمد اخلاق کے گھر سے برآمد گوشت کی فارنسک جانچ میں بیف ہونے کی تصدیق کی گئی ہے ۔

    نئی دہلی پورے ملک کو ہلا کر رکھ دینے والے دادری سانحہ کی جانچ میں ایک نیا موڑ آ گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق محمد اخلاق کے گھر سے برآمد گوشت کی فارنسک جانچ میں بیف ہونے کی تصدیق کی گئی ہے ۔

    • Pradesh18
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی پورے ملک کو ہلا کر رکھ دینے والے دادری سانحہ کی جانچ میں ایک نیا موڑ آ گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق محمد اخلاق کے گھر سے برآمد گوشت کی فارنسک جانچ میں بیف ہونے کی تصدیق کی گئی ہے ۔ خیال رہے کہابتدائی جانچ میں جانوروں کے سرکاری ڈاکٹروں نے گوشت کو بکرے کا گوشت بتایا تھا۔ مگر اب متھرا لیب نے اس کو بیف کا گوشت بتایا ہے۔
      قابل ذکر ہے کہ ستمبر 2015 میں دادری میں مشتعل بھیڑ نے محمد اخلاق کے گھر میں گھس کر اس کا قتل کر دیا تھا ، جبکہ اس کے بیٹے کو شدید طور پر زخمی کر دیا تھا۔ یوپی پولیس نے واقعہ کی جانچ کے دوران اخلاق کے گھر سے برآمد گوشت کو فارنسک جانچ کے لئے بھیجا تھا۔ متھرا کے لیب سے اس کی جانچ رپورٹ آ گئی ہے، جس میں برآمد گوشت کے مٹن ہونے کی بجائے بیف ہونے کی تصدیق کی گئی ہے۔
      غور طلب ہے کہ شروع میں اسی گوشت کو جانوروں کے سرکاری ڈاکٹروں نے بکرے کا گوشت بتایا تھا، جس کے بعد یوپی حکومت نے وزارت داخلہ کو رپورٹ بھیجی کہ اخلاق اور اس کے بیٹے دانش پر کچھ نامعلوم افراد نے ممنوعہ جانور کا گوشت کھانے کے غیر مصدقہ الزامات کے بعد حملہ کیا تھا۔
      First published: