ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

میرٹھ : کورونا انفیکشن کے خطرے پر بھاری پڑی دیوالی کی خریداری ، بد احتیاطی کے ساتھ بازاروں میں بڑھی خریداروں کی بھیڑ

دیوالی کے موقع پر سجے بازاروں میں بھی رونق لوٹ آئی ہے اور دیوالی کی خریداری کرنے والے بے خوف بازاروں میں خریداری کرنے میں مصروف نظر آ رہے ہیں ۔

  • Share this:
میرٹھ : کورونا انفیکشن کے خطرے پر بھاری پڑی دیوالی کی خریداری ، بد احتیاطی کے ساتھ بازاروں میں بڑھی خریداروں کی بھیڑ
میرٹھ : کورونا انفیکشن کے خطرے پر بھاری پڑی دیوالی کی خریداری ، بد احتیاطی کے ساتھ بازاروں میں بڑھی خریداروں کی بھیڑ

مارچ میں لاک ڈاون کے بعد رمضان سے لے کرعید ، رکشا بندھن اور رام نومی تک سبھی تہوار کورونا وبا کی بھینٹ چڑھ گئے اور بازار اور کاروبار بھی اس وجہ سے بری طرح متاثر ہوا ، لیکن دیوالی سے قبل بازار کی رونق دوبارہ واپس لوٹتی نظر آ رہی ہے ۔ میرٹھ  میں بھی دیوالی کے موقع پر شہر کے بازاروں میں خریداری سے رونق نظر آئی ، لیکن اس دوران کورونا انفیکشن کے خطرے سے بچاو کے لیے احتیاطی تدابیر پر کم لوگ ہی عمل کرتے نظر آئے ۔ دہلی اور این سی آر علاقہ میں کورونا وبا کی دوسری لہر کا خطرہ بڑھتا جا رہا ہے ، لیکن لوگوں پر اس کا خوف کم ہی نظر آرہا ہے ۔


دیوالی کے موقع پر سجے بازاروں میں بھی رونق لوٹ آئی ہے اور دیوالی کی خریداری کرنے والے بے خوف بازاروں میں خریداری کرنے میں مصروف نظر آ رہے ہیں ۔ سماجی دوری ، سنیٹائزر اور ماسک کا استعمال بھی بہت کم ہو رہا ہے ۔ صدر بازار کے کاروباری اور دکاندار کا کہنا ہے کہ مارچ سے لے کر اب تک کتنے ہی تہوار گزر گئے ، عید اور رکشا بندھن جیسے تہواروں پر بھی بازار بند رہے اور کاروبار نہیں ہو سکا ، ایسے میں اب جب دیوالی کے موقع پر بازار کھل گئے ہیں اور پابندیاں بھی کم کی گئی ہیں ، تو لوگ خریداری کے لئے نکل رہے ہیں اور کاروبار کی رونق بھی واپس لوٹنے لگی ہے ۔


دیوالی کے موقع پر سجے بازاروں میں بھی رونق لوٹ آئی ہے ۔
دیوالی کے موقع پر سجے بازاروں میں بھی رونق لوٹ آئی ہے ۔


وہیں خریدار بھی بے خوف ہوکر بازار میں نکل رہے ہیں اور خریداری کر رہے ہیں ۔ دیوالی کے موقع پر لوگ مٹھائی کے علاوہ گھر کے سجاوٹی سامان اور دیئے خرید رہے ہیں ، بزرگ اور بچے تو کم نظر آرہے ہیں ، لیکن نوجوان لوگ خریداری کے لئے نکل رہے ہیں ، وہیں بد احتیاطی کے ساتھ بازاروں میں نکلنے والی بھیڑ سے انفیکشن کا خطرہ بھی بڑھ گیا ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Nov 13, 2020 11:25 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading