ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

میرٹھ: کسان تحریک کے سبب راستے بند ہونے سے منڈی تک سبزی پہنچنے میں مشکلات

دلّی اور یوپی کے بارڈر سے سپلائی متاثر ہونے سے جہاں دلّی میں سبزیوں کے دام میں اضافہ ہوا ہے وہیں میرٹھ اور این سی آر کے دوسرے حصوں میں سبزیوں کے دام نہ ملنے سے سب سے زیادہ نقصان کسانوں کا ہو رہا ہے۔

  • Share this:
میرٹھ: کسان تحریک کے سبب راستے بند ہونے سے منڈی تک سبزی پہنچنے میں مشکلات
میرٹھ: کسان تحریک کے سبب راستے بند ہونے سے منڈی تک سبزی پہنچنے میں مشکلات

میرٹھ ۔ زرعی قانون کے خلاف گزشتہ ڈیڑھ ماہ سے جاری کسانوں کے احتجاج کا اثر دلّی اور این سی آر علاقے میں سبزی کی سپلائی پر بھی پڑا ہے ۔ لیکن دلّی اور  یوپی کے بارڈر سے سپلائی متاثر ہونے سے جہاں دلّی میں سبزیوں کے دام میں اضافہ ہوا ہے وہیں میرٹھ اور این سی آر کے دوسرے حصوں میں سبزیوں کے دام نہ ملنے سے سب سے زیادہ نقصان کسانوں کا ہو رہا ہے۔


میرٹھ کے کھرکھودا علاقے میں بڑے پیمانے پر گوبھی، آلو اور گیندا پھول کی کاشتکاری کی جاتی ہے۔ بڑے پیمانے پر کی جانے والی سبزی اور پھول کی کاشت کی سپلائی دہلی کی غازی پور منڈی میں کی جاتی ہے لیکن گزشتہ ڈیڑھ ماہ سے گوبھی، دھنیا اور آلو جیسی سبزی اور گیندا  پھول کی یہ سپلائی متاثر ہو رہی ہے۔ تیار فصل کی اٹھان نہ ہونے سے کاشتکار پریشان ہے۔ گوبھی کی تیار فصل کھیتوں میں پڑی خراب ہو رہی ہے اور منافع کے بجائے خرچ بھی نہ نکل پانے سے  کاشتکار اسے کھیت میں جوت رہے ہیں۔


فصلوں کی سپلائی متاثر ہونے سے کاشتکاروں کو ہو رہے نقصان کی وجہ سے کسان چاہتے ہیں کہ احتجاجی دھرنے کو پیش نظر رکھتے ہوئے زرعی قوانین کو لیکر حکومت جلد کسی نتیجے پر پہنچے تاکہ راستے مکمل طور پر کھل سکیں۔ ایک طرف جہاں کسان زرعی قوانین کو لیکر پریشان ہے وہیں مغربی یوپی کا  کسان سبزیوں کی سپلائی متاثر ہونے سے پریشان ہے اور جلد سے جلد اس معاملے کو حل کیے جانے کا حکومت سے مطالبہ کر رہا ہے۔

Published by: Nadeem Ahmad
First published: Jan 15, 2021 11:03 PM IST