ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

اُمید کی ٹرین ہوئی روانہ، لاک ڈاؤن کے مشکل وقت میں گھر پہنچنے کی جدوجہد 

مزدوروں کا کہنا تھا کہ لاک ڈاؤن کے اس مشکل وقت کو انہوں نے بہت پریشانی کے عالم میں گزارا ہے۔ کئی کئی وقت بغیر کھانے کے گزارا ہے اور ہر گھڑی اپنے وطن اور گھر کو یاد کیا ہے۔

  • Share this:
اُمید کی ٹرین ہوئی روانہ، لاک ڈاؤن کے مشکل وقت میں گھر پہنچنے کی جدوجہد 
لاک ڈاؤن کے سبب مزدوروں کو کافی پریشانی اٹھانی پڑی ہے۔ فائل فوٹو

میرٹھ ۔ تقریباً 19 سو مزدوروں کو لیکر آج میرٹھ سے پہلی شرمک ایکسپریس ٹرین بہار کے ارریہ کے لئے روانہ ہو گئی۔ بہار کے سات ضلعوں سے تعلق رکھنے والے افراد اس ٹرین کے ذریعہ اپنے وطن کو روانہ ہوئے۔ ٹرین میں سوار ہونے کے لیے میرٹھ کے سٹی ریلوے اسٹیشن پر آج صبح سے ہی جانے والوں کی بھیڑ جمع ہو گئی۔ ٹرین میں داخل ہونے سے پہلے ان افراد کی تھرمل اسکریننگ کی گئی لیکن اس دوران اسٹیشن پر بدانتظامی بھی نظر آئی۔ نہ تو اسٹیشن پر اور نہ ہی ٹرین کے اندر کسی طرح کی سوشل ڈسٹنسنگِ پر عمل کروایا جا سکا۔


لاک ڈاؤن میں ڈیڑھ ماہ سے زیادہ کا وقت مشکل حالات میں گزار کر اپنے گھروں کو روانہ ہونے والے لوگوں سے جب ہماری ٹیم نے بات کی تو ان غریب مزدوروں نے لاک ڈاؤن کے مشکل حالات اور گھر واپسی کے لیے جدوجہد کے تاثرات بیان کیے۔ مزدوروں کا کہنا تھا کہ لاک ڈاؤن کے اس مشکل وقت کو انہوں نے بہت پریشانی کے عالم میں گزارا ہے۔ کئی کئی وقت بغیر کھانے کے گزارا ہے اور ہر گھڑی اپنے وطن اور گھر کو یاد کیا ہے۔


شرمک اسپیشل ٹرین کے ذریعہ آج میرٹھ سے کشمیر کے لیے بھی تین سو سے زیادہ کشمیری اپنے گھروں کو روانہ ہوئے


شرمک اسپیشل ٹرین کے ذریعہ آج میرٹھ سے کشمیر کے لیے بھی تین سو سے زیادہ کشمیری اپنے گھروں کو روانہ ہوئے۔ گزشتہ ڈیڑھ ماہ سے زیادہ وقت سے مغربی یو پی کے مختلف اضلاع میں پھنسے ہوئے کشمیری جن میں زیادہ تر طالب علم اور نوکری پیشہ نوجوان ہیں آج میرٹھ سٹی ریلوے اسٹیشن سے مراد آباد، اودھم پور اسپیشل ٹرین کے ذریعے جموں اور اودھم پور کے لیے روانہ ہو گئے۔ جموں اور اودھم پور اسٹیشن پہنچنے کے بعد ان لوگوں کو سیٹ بس سروس کے ذریعہ ان کے علاقوں میں بھیجا جائیگا۔ وہ نوئیڈا اور غازی آباد سے بسوں کے ذریعہ میرٹھ پہنچے۔
First published: May 19, 2020 12:49 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading