ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

میرٹھ : ٹرینوں کے نہ چلنے سے بری طرح متاثر ہوا پلیٹ فارم ونڈروں اور اسٹیشن دکانداروں کا روزگار 

کوروناوائرس وبا کے قہر سے متاثر کاروباری طبقہ ان لاک میں حاصل رعایت کے بعد سے اب دھیرے دھیرے حالات سے ابھرنے کی کوشش کر رہا ہے لیکن ٹرینوں کے مکمّل طور پر پٹری پر نہ لوٹنے سے ریلوے پلیٹ فارم اور اسٹیشنوں کے دکانداروں کا روزگار بری طرح متاثر ہوا ہے

  • Share this:
میرٹھ : ٹرینوں کے نہ چلنے سے بری طرح متاثر ہوا پلیٹ فارم ونڈروں اور اسٹیشن دکانداروں کا روزگار 
ٹرینوں کے مکمّل طور پر پٹری پر نہ لوٹنے سے ریلوے پلیٹ فارم اور اسٹیشنوں کے دکانداروں کا روزگار بری طرح متاثر

کوروناوائرس وبا کے قہر سے متاثر کاروباری طبقہ ان لاک میں حاصل رعایت کے بعد سے اب دھیرے دھیرے حالات سے ابھرنے کی کوشش کر رہا ہے لیکن ٹرینوں کے مکمّل طور پر پٹری پر نہ لوٹنے سے ریلوے پلیٹ فارم اور اسٹیشنوں کے دکانداروں کا روزگار بری طرح متاثر ہوا ہے اور ان کی کاروبار کی گاڑی بے پٹری ہو گئی۔ ریلوے اسٹیشنوں پر موجود کھومچے اور گمٹی والوں کے علاوہ اسٹیشن کے باہر موجود دکانداروں کا کاروبار مکمّل طور پر اسٹیشنوں پر آنے والے مسافروں پر منحصر ہوتا ہے لیکن مارچ ماہ میں لاگو لاک ڈاؤن کے بعد جہاں مسافر ٹرینوں کو بند کر دیا گیا۔


وہیں ان لاک کے بعد بھی پٹری پر نہ کے برابر ٹرینیں ہی دوڑ رہی ہیں، ان حلات میں پلیٹ فارم وینڈروں اور اسٹیشن دکانداروں کا روزگار ختم ہو گیا ہے۔ اسٹیشن کے باہر موجود دکانوں اور ہوٹل کاروباریوں کے مطابق مارچ کے بعد سے کو روزگار کا سلسلہ بند ہوا ہے۔ وہ اب تک شروع نہیں ہو سکا ہے۔ کئی کاروباری تو قرض لیکر گھر کے اخراجات پورے کر رہے ہیں۔ شہر کے بازار اور کاروبار کھل جانے کے باوجود ریلوے اسٹیشنوں پر مسافروں کے ذریعہ روزگار حاصل کرنے والے دکاندار ٹرینوں کے نہ چلنے سے پریشان ہیں ٹرینوں کی تعداد کم ہونے سے صرف پلیٹ فارم وینڈز ہی پریشان نہیں ہیں بلکہ رکشا اور آٹو والے بھی پریشان ہیں۔


وہیں ریلوے کے زمہ دار افسران کے مطابق حالات کے پیش نظر پلیٹ فارم دکاندارو اور پارکنگ والوں کی کرایہ معافی کے ذریعہ راحت دینے کی کوشش کی گئی ہے لیکن مسافروں کے نہ آنے سے دکاندار اپنے اسٹال بند رکھنے پر مجبور ہیں۔ ان لاک ون کے بعد سے پابندیوں میں ملی رعایت کے بعد شہر کے بازار اور کاروبار کے کھلنے سے کاروباری طبقے کو کچھ راحت تو حاصل ہوئی لیکن اسٹیشنوں پر روزگار حاصل کرنے والے دکانداروں کو ٹرینوں کے چلنے کے بعد حلات کے معمول پر لوٹنے کا انتظار ہے۔

Published by: sana Naeem
First published: Nov 12, 2020 05:10 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading