ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

میرٹھ : کیوں ہو رہا ہے آکسیجن گیس سلنڈر کی قیمتوں میں اضافہ؟

کورونا انفیکشن کے زیادہ تر معاملوں میں سانس لینے میں تکلیف کے معاملے سامنے آئے ہیں۔ ایسے میں مریض کو آکسیجن دی جانی ضروری ہے ۔ وہیں کریٹیکل کیسیز میں مریض کو وینٹیلیٹر پر رکھ کر ہائی فلو نوزل کیلنڈولا کے ذریعے آکسیجن دی جاتی ہے جس میں 30 سے 40 فیصد آکسیجن کا استعمال زیادہ ہو گیا ہے۔

  • Share this:
میرٹھ : کیوں ہو رہا ہے آکسیجن گیس سلنڈر کی قیمتوں میں اضافہ؟
کیوں ہو رہا ہے آکسیجن گیس سلنڈر کی قیمتوں میں اضافہ

میرٹھ ۔ کورونا انفیکشن کے بڑھتے معاملوں اور لنگ انفیکشن سے سانس کے مریضوں کی تعداد میں اضافہ سے آکسیجن گیس سلنڈر کی مانگ میں بھی اضافہ ہو گیا ہے۔ کورونا انفیکشن کے خوف میں احتیاط کے طور پر سلنڈر کا اسٹاک کرنے والوں کی وجہ سے ان دنوں آکسیجن گیس کی مانگ میں دو گنا تک کا اضافہ ہو گیا ہے۔ وہیں ڈیمانڈ اور سپلائی میں تال میل بنائے رکھنے اور کالابازاری روکنے کے لیے محکمہ صحت بھی فکرمند نظر آ رہا ہے۔


کورونا انفیکشن کے زیادہ تر معاملوں میں سانس لینے میں تکلیف کے معاملے سامنے آئے ہیں۔ ایسے میں مریض کو آکسیجن دی جانی ضروری ہے ۔ وہیں کریٹیکل کیسیز میں مریض کو وینٹیلیٹر پر رکھ کر ہائی فلو نوزل کیلنڈولا کے ذریعے آکسیجن دی جاتی ہے جس میں 30 سے 40 فیصد آکسیجن کا استعمال زیادہ ہو گیا ہے۔ ایسے میں نرسنگ ہوم اور اسپتالوں میں بھی آکسیجن سلنڈر کی ضرورت کے پیش نظر آکسیجن گیس سلنڈر کی مانگ بڑھنے سے سپلائر نے بھی دام میں اضافہ کر دیا ہے۔ وہیں گیس ڈسٹریبیوٹر کا کہنا ہے کہ ڈیمانڈ بڑھنے اور  سپلائی کم ہونے سے قیمتوں میں اضافہ ہوا ہے۔


ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ کورونا اور لنگ انفیکشن کے معاملوں کے علاوہ کورونا انفیکشن کے خوف نے عام لوگوں میں بھی آکسیجن سلنڈر کے استعمال کو لیکر بیدار کیا ہے۔ ایسے میں آکسیجن کی مانگ بڑھنا لازمی ہے۔ لیکن ضرورت کے پیش نظر آکسیجن گیس کے پروڈکشن اور سپلائی کو لیکر حکومت کی جانب سے کوئی خاص پیش رفت نظر نہیں آتی ہے۔ وہیں آکسیجن گیس ڈیمانڈ اور سپلائی میں فرق سے محکمہ صحت کے ذمہ دار افسران بھی فکرمند نظر آ رہے ہیں لیکن کورونا مریضوں کی ضرورت کے مطابق کووڈ اسپتالوں میں آکسیجن گیس سپلائی کو لیکر مطمئن ہیں۔ کورونا انفیکشن کے بڑھتے معاملوں کے پیش نظر ضرورت کے مطابق آکسیجن گیس سپلائی کو بنائے رکھنا حکومت کی ذمہ داری ہے اور اس کے لئے ضروری ہے کہ ایک طرف تو گیس پروڈکشن بڑھایا جائے تو دوسری جانب جمع خوری کرنے والوں پر کارروائی کی جائے۔

Published by: Nadeem Ahmad
First published: Sep 18, 2020 03:23 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading