ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

محبوبہ مفتی نےکہا 'واجپئی جی کےتمام کارناموں کومسمارکرنے پرتلے ہوئے ہیں مودی'۔

محبوبہ مفتی نےآرپارتجارت کی معطلی کوبدقسمتی سےتعبیرکرتےہوئےکہا 'جموں وکشمیرکا اگرکوئی حل ہےتووہ یہی ہےکہ راستےجتنےبھی ہیں، انہیں کھول دیا جانا چاہئے۔

  • UNI
  • Last Updated: Apr 19, 2019 06:55 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
محبوبہ مفتی نےکہا 'واجپئی جی کےتمام کارناموں کومسمارکرنے پرتلے ہوئے ہیں مودی'۔
محبوبہ مفتی: فائل فوٹو

سری نگر: پی ڈی پی صدرمحبوبہ مفتی نےکہا کہ وزیراعظم نریندرمودی، اٹل بہاری واجپئی کےتمام کارناموں کومسمارکرنے پرتلے ہوئے ہیں۔ جمعہ کے روز یہاں اپنی رہائش گاہ پرنامہ نگاروں کے ساتھ مرکزی وزارت داخلہ کی طرف سےآرپار تجارت کوتا حکم ثانی معطل کرنےکے حوالے سے بات کرتے ہوئے محبوبہ مفتی نے کہا 'جو بھی واجپئی جی نےکا م کئے ایسا لگتا ہے کہ مودی ان کو مسمار کرنا چاہتے ہیں۔


انہوں نے کہا کہ واجپئی جی کی جو بھی پالیسیاں تھیں، پاکستان کےساتھ بات چیت شروع کرنے کی، جموں وکشمیرمیں بات چیت کا سلسلہ شروع کرنے کا اورراستےکھولنےکا، ایسا لگتا ہےکہ آج کی بی جے پی سرکارواجپئی جی کےان تمام فیصلوں اوراعتماد سازی کےاقدام کومسمارکرنا چاہتی ہے'۔


محبوبہ مفتی نےآرپارتجارت کی معطلی کوبدقسمتی سےتعبیرکرتے ہوئےکہا 'جموں وکشمیر کا اگرکوئی حل ہےتووہ یہی ہےکہ راستے جتنے بھی ہیں انہیں کھول دیا جانا چاہئے، میں مرکزی حکومت سے کہنا چاہتی ہوں کہ جموں وکشمیرکی صورتحال بہت ہی گھمبیرہے، جس کی ایک مثال ہم نے پلوامہ میں دیکھی۔ اگرجموں وکشمیرکےراستوں کوبندکیا گیا تواس کے برے نتائج برآمد ہوں گے'۔


پی ڈی پی سربراہ نےکہا کہ جتنے بھی پرانے راستے ہیں، جوہمیں وسطی وجنوبی ایشیا کے ساتھ جوڑتےہیں جیسےکرگل ۔اسکردوروڑ، جموں۔ سیالکوٹ روڑیا مظفرآباد روڑہیں، کو کھول دیا جانا چاہئے یہیں سے مسئلہ کشمیرکے حل کے راستے بھی نکلیں گے۔ انہوں نے کہا کہ جب میں وزیراعلیٰ تھی، تو انہوں نےمجھے بھی اس راستے کو بند کرنےکوکہا تھا، لیکن میں نےمدافعت کی۔
First published: Apr 19, 2019 06:29 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading