உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مودی کابینہ میں 22 جون کو توسیع متوقع ، یوپی اور اتراکھنڈ کے چہروں کو ملے گی ترجیح

    وزیر اعظم مودی: فائل فوٹو

    وزیر اعظم مودی: فائل فوٹو

    نئی دہلی : وزیر اعظم مودی کی کابینہ میں 22 جون کو توسیع ہوسکتی ہے۔ بتایا جا رہا ہے کہ کابینہ میں اتر پردیش اور اتراکھنڈ میں اگلے سال ہونے والے انتخابات کے پیش نظر وہاں کے چہروں کو ترجیح دی جاسکتی ہے۔

    • Pradesh18
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی : وزیر اعظم مودی کی کابینہ میں 22 جون کو توسیع ہوسکتی ہے۔ بتایا جا رہا ہے کہ کابینہ میں اتر پردیش اور اتراکھنڈ میں اگلے سال ہونے والے انتخابات کے پیش نظر وہاں کے چہروں کو ترجیح دی جاسکتی ہے۔
      ذرائع نے سی این این - نیوز 18 کو بتایا کہ اتراکھنڈ سے بھگت سنگھ کوشیاری اور آسام سے رامیشور تیلی کو مودی کابینہ میں شامل کیا جاتا ہے۔ کابینہ میں اسپورٹس کے وزیر مملکت (آزادانہ چارج) کے طور پر ایک نئے وزیر کو شامل کیا جائے گا۔ یہ عہدہ سربانند سونووال کے آسام کے وزیر اعلی بننے کے بعد سے خالی ہے۔
      ذرائع کے مطابق کابینہ میں ردوبدل کے لئے 18 سے 22 جون تک کا وقت ہی دستیاب ہے۔ صدر کے 18 جون کو وطن لوٹنے آنے کی امید ہے، جبکہ وزیر اعظم مودی کو 23 جون کو غیر ملکی دورے پر جانا ہے۔ اس دوران 21 جون کو انٹرنیشنل یوگا دن کا بھی پروگرام ہے۔
      مانا جا رہا ہے کہ کابینہ میں توسیع کے بعد تنظیم میں بھی تبدیلی کی جائے گی ۔ قیاس آرائی کی جا رہی ہے کہ مودی کمزور کارکردگی اور حکومت کے مقصد کو حاصل کرنے میں ناکام رہنے والے چھ وزراء کی چھٹی کر یں گے۔
      تاہم یہ تقریبا طے ہے کہ سینئر بی جے پی لیڈر ارون جیٹلی، سشما سوراج، راج ناتھ سنگھ اور نتن گڈکری کے محکمہ نہیں بدلے جائیں گے۔ذرائع نے بتایا کہ مودی اپنے کابینہ میں کچھ تبدیلیاں کریں گے ، جس سے زیر التوا کاموں پر صحیح طریقے سے عمل درآمد ہو سکے۔
      First published: