உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پی ایم مودی کے منقولہ اثاثے 26 لاکھ سے بڑھ کر 2.23 کروڑ ہوگئے، پی ایم او کا تازہ ترین ڈیٹا

    اب ان کے پاس کوئی غیر منقولہ جائیداد نہیں ہے۔

    اب ان کے پاس کوئی غیر منقولہ جائیداد نہیں ہے۔

    PM Modi Birthday: سال 2021 میں ہندوستان ٹائمز کی ایک رپورٹ کے مطابق مودی کے پاس نیشنل سیونگ سرٹیفکیٹ (8.9 لاکھ روپے)، 1.5 لاکھ روپے کی لائف انشورنس پالیسیاں اور اینڈ ٹی ٹی انفراسٹرکچر بانڈز کی شکل میں سرمایہ کاری ہے، جسے انہوں نے 2012 میں 20,000 روپے میں خریدا تھا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | Hyderabad | Mumbai | Lucknow | Bangaon
    • Share this:
      وزیر اعظم کے دفتر (PMO) کے تازہ ترین اعلان میں وزیر اعظم نریندر مودی کے منقولہ اثاثوں میں 22-2021 میں 26 لاکھ روپے کا اضافہ ہوا ہے۔ جو مارچ 2021 کے آخر میں 1,97,68,885 روپے سے بڑھ کر 2,23,82,504 روپے ہو گیا۔ گجرات میں رہائشی پلاٹ میں اپنا حصہ عطیہ کرنے کے بعد اب ان کے پاس کوئی غیر منقولہ جائیداد نہیں ہے۔

      منقولہ جائیدادوں کے تجزیے سے ظاہر ہوتا ہے کہ نقدی کی مقدار میں معمولی کمی آئی ہے۔ جو پچھلے سال 36,900 روپے سے 35,250 روپے تک پہنچ گئی ہے۔ انڈین ایکسپریس کی ایک رپورٹ کے مطابق ام کا بینک بیلنس 31 مارچ 2021 کو 1,52,480 روپے سے 46,555 روپے سے کم ہو گیا ہے۔

      وزیر اعظم نے غیر منقولہ سیکشن میں 'NIL' کا ذکر کیا ہے۔ ایک ریلیز میں بتایا گیا ہے کہ غیر منقولہ جائیداد کا سروے نمبر 401/A تین دیگر مشترکہ مالکان کے ساتھ مشترکہ طور پر کیا گیا تھا اور ہر ایک کا 25 فیصد مساوی حصہ ہے، اب وہ خود کی ملکیت نہیں ہے کیونکہ اسے عطیہ کیا گیا ہے۔ پی ایم مودی نے گزشتہ سال رہائشی جائیداد کا اعلان کیا تھا، جسے انہوں نے 2002 میں خریدا تھا اور اس میں صرف ایک چوتھائی حصہ ہے۔ جس کی پراپرٹی کی مارکیٹ ویلیو 1.10 کروڑ روپے ہے۔

      اس کے اعلان میں ایک سال قبل 1.48 لاکھ روپے کی چار سونے کی انگوٹھیاں بھی شامل ہیں۔ پی ایم او کی ویب سائٹ 10 مرکزی وزراء کا اعلان بھی دکھاتی ہے۔ مرکزی وزراء میں وزیر دفاع راج ناتھ سنگھ کے اثاثے 29.58 روپے بڑھ کر 2.24 کروڑ روپے سے بڑھ کر 31 مارچ 2022 تک 2.54 کروڑ روپے ہو گئے۔

      2021 میں ہندوستان ٹائمز کی ایک رپورٹ کے مطابق مودی کے پاس نیشنل سیونگ سرٹیفکیٹ (8.9 لاکھ روپے)، 1.5 لاکھ روپے کی لائف انشورنس پالیسیاں اور اینڈ ٹی ٹی انفراسٹرکچر بانڈز کی شکل میں سرمایہ کاری ہے، جسے انہوں نے 2012 میں 20,000 روپے میں خریدا تھا۔

      یہ بھی پڑھیں: 

      آج ہوگا وزیراعظم کا خطاب،مودی اور پوتن کی ملاقات پر نگاہیں، جن پنگ سے بات چیت پر اندیشہ برقرار


      وزیر تعلیم دھرمیندر پردھان کے خالص اثاثوں کی مالیت 31 مارچ 2022 کے آخر میں 1.62 کروڑ روپے سے بڑھ کر 1,83 کروڑ روپے ہو گئی۔ وزیر مویشی پالن پرشوتم روپالا کی کل مالیت 7.29 کروڑ روپے ہے، جو گزشتہ سال کے مقابلے میں 1.42 کروڑ روپے زیادہ ہے۔ وزیر ہوا بازی جیوترادتیہ سندھیا نے 31 مارچ 2022 تک کل اثاثہ جات 35.63 کروڑ روپے اور واجبات 58 لاکھ روپے بتائے ہیں۔ جب کہ وزیر ثقافت جی کشن ریڈی نے کل اثاثوں کی مالیت 1.43 کروڑ روپے بتائی ہے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: