ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

ٹی ڈی پی نے این ڈی اے سے توڑا ناطہ ، بی جے پی نے آندھرا کے لیڈروں کی بلائی ایمرجنسی میٹنگ

آندھر پردیش کو خصوصی ریاست کا درجہ نہیں دئے جانے سے ناراض چندرا بابو نائیڈو کی تیلگو دیشم پارٹی کے این ڈی اے سے ناطہ توڑ لینے کے بعد اب سیاسی ہلچل تیز ہوگئی ہے ۔

  • Share this:
ٹی ڈی پی نے این ڈی اے سے توڑا ناطہ ، بی جے پی نے آندھرا کے لیڈروں کی بلائی ایمرجنسی میٹنگ
آندھر پردیش کو خصوصی ریاست کا درجہ نہیں دئے جانے سے ناراض چندرا بابو نائیڈو کی تیلگو دیشم پارٹی کے این ڈی اے سے ناطہ توڑ لینے کے بعد اب سیاسی ہلچل تیز ہوگئی ہے ۔

نئی دہلی : آندھر پردیش کو خصوصی ریاست کا درجہ نہیں دئے جانے سے ناراض چندرا بابو نائیڈو کی تیلگو دیشم پارٹی کے این ڈی اے سے ناطہ توڑ لینے کے بعد اب سیاسی ہلچل تیز ہوگئی ہے ۔ جہاں ایک طرف بی جے پی نے آندھرا پردیش کے اپنے لیڈروں کو دہلی طلب کیا ہے ، وہیں تیلگو دیشم پارٹی کے لیڈروں کی بھی میٹنگ جاری ہے۔

ٹی ڈی پی کے این ڈی سے الگ ہونے کے بعد بی جے پی اعلی قیادت نے آندھرا پردیش کے اپنے لیڈروں کی دہلی میں ایک ہنگامی میٹنگ بلائی ہے ۔ بتایا جارہا ہے کہ اس میٹنگ میں موجودہ صورتحال پر گفتگو کی جائے گی ۔ اس درمیان ایوان میں ٹی ڈی پی ممبران پارلیمنٹ کی بھی الگ سے میٹنگ ہورہی ہے ۔ ذرائع کے مطابق اس میٹنگ میں ترنمول کانگریس کے اراکین بھی شامل ہیں۔

بتایا جارہا ہے کہ این ڈی اے سے الگ ہونے کے بعد ٹی ڈی پی پارلیمنٹ میں الگ سے عدم اعتماد کی تحریک پیش کرنے جارہی ہے ۔ وائی ایس آر کانگریس پہلے ہی مودی حکومت کے خلاف عدم اعتماد کی تحریک کا نوٹس دے چکی ہے اور اس نے اس کی حمایت کیلئے سبھی سیاسی پارٹیوں سے اپیل کی ہے۔ کانگریس نے وائی ایس آر کانگریس کی تحریک کی حمایت کا اعلان بھی کردیا ہے۔

ادھر ٹی ڈی پی کے این ڈی اے سے الگ ہونے کو جنتادل یونائٹیڈ کے لیڈر کے سی تیاگی نے افسوسنا ک قرار دیا ہے ۔ تیاگی کا کہنا ہے کہ بڑے اتحاد میں اختلاف رائے ہوئے رہتے ہیں ، این ڈی اے حکومت کو کوئی خطرہ نہیں ہے ، لیکن این ڈی اے حکومت سے ٹی ڈی پی کا الگ ہونا بدقسمتی ہے۔

First published: Mar 16, 2018 01:19 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading