உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ممبئی ڈرگس کیس : این سی بی افسر سمیر وانکھیڑے پہنچے دہلی ، وصولی کے الزامات کو بتایا بے بنیاد

    ممبئی ڈرگس کیس : این سی بی افسر سمیر وانکھیڑے پہنچے دہلی ، وصولی کے الزامات کو بتایا بے بنیاد

    ممبئی ڈرگس کیس : این سی بی افسر سمیر وانکھیڑے پہنچے دہلی ، وصولی کے الزامات کو بتایا بے بنیاد

    Mumbai Drugs Case: این سی بی افسر نے اپنے اوپر لگے رشوت کے الزامات کو بے بنیاد بتایا اور کہا کہ انہیں یہاں کسی نے نہیں بلایا ہے اور وہ کسی اور وجہ سے دہلی آئے ہیں ۔

    • Share this:
      نئی دہلی : ممبئی ڈرگس کیس میں جبری وصولی کے الزامات کے درمیان نارکوٹکس کنٹرول بیورو ممبئی کے افسر سمیر وانکھیڑے پیر کی رات کو دہلی پہنچے ۔ این سی بی افسر نے اپنے اوپر لگے رشوت کے الزامات کو بے بنیاد بتایا اور کہا کہ انہیں یہاں کسی نے نہیں بلایا ہے اور وہ کسی اور وجہ سے دہلی آئے ہیں ۔ نیوز ایجنسی اے این آئی سے وانکھیڑے نے کہا کہ مجھے بلایا نہیں گیا ہے ، میں یہاں ایک الگ مقصد سے آیا ہوں ، میرے خلاف سبھی الزامات بے بنیاد ہیں ۔

      اتوار کو معاملہ کے ایک آزاد گواہ پربھاکر سیل نے میڈیا کو دئے ایک بیان میں دعوی کیا تھا کہ این سی بی کے ایک افسر اور فرار گواہ کے پی گوساوی سمیت دیگر افراد کے ذریعہ ملزم کو نشیلی اشیا معاملہ میں چھوڑنے کیلئے 25 کروڑ روپے کی مانگ کی گئی تھی ۔ سیل نے دعوی کیا تھا کہ وہ جلد ہی ثبوت بھی پیش کریں گے ۔

      کرن گوساوی لکھنؤ پولیس کے سامنے ڈال سکتا ہے ہتھیار

      ادھر آرین خان سے وابستہ منشیات معاملے میں گواہ بنائے گئے کرن گوساوی ممبئی میں پولیس سے خود کو خطرہ بتاتے ہوئے لکھنؤ میں خودسپردگی کر سکتا ہے۔ سنسنی خیز معاملہ میں گواہ بنائے جانے کے بعد لاپتہ ہونے والے گوساوی نے پیر کو ٹیلی فون پر ایک نیوز چینل کو بتایا کہ وہ جلد ہی لکھنؤ میں خودسپردگی کرنے والے ہیں۔

      واضح رہے کہ گوساوی پر حال ہی میں ان کے ہی سیکورٹی گارڈ نے آرین خان سے متعلق منشیات کے معاملہ میں کروڑوں روپے کی لین دین جیسے سنسنی خیز الزامات لگائے تھے۔ گوساوی نے ایک چینل کو بتایا کہ وہ جلد ہی لکھنؤ پہنچنے والے ہیں اور اپنے خلاف لگائے گئے الزامات کی حقیقت سے پردہ اٹھانے کے لیے کسی بھی قریبی پولیس اسٹیشن میں خودسپردگی کردیں گے۔

      ذرائع کے مطابق گوساوی کی ٹی وی نمائندے کے ساتھ ٹیلی فونک گفتگو کا ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کے بعد لکھنؤ پولیس محتاط ہوگئی ہے۔ تاہم لکھنؤ کے پولس کمشنر ڈی کے ٹھاکر نے ان باتوں سے انکار کیا ہے۔ ابھی تک گوساوی کے خودسپردگی کرنے یا حراست کی تصدیق نہیں ہوئی ہے۔ لیکن کچھ میڈیا والے مادیاواں پولیس اسٹیشن پہنچنا شروع ہو گئے تھے۔ ویڈیو میں گوساوی کو یہ کہتے ہوئے سنا گیا ہے کہ وہ مہاراشٹر پولیس کے سامنے خودسپردگی کرنا چاہتے تھے لیکن مسلسل دھمکیوں کی وجہ سے ایسا نہیں کر سکے۔ منشیات کا معاملہ سامنے آنے کے کچھ ہی دیر بعد گوساوی کی آرین خان کے ساتھ سیلفی بھی وائرل ہوگئی تھی۔

      ویڈیو میں گوساوی بتا رہے ہیں کہ وہ ممبئی پولیس کے سامنے خودسپردگی کرنا چاہتے تھے لیکن مسلسل دھمکیوں کی وجہ سے انہیں یہاں آنا پڑا۔ تاہم کس کی طرف سے دھمکیاں ملنے کے سوال پر انہوں نے بتایا کہ وہ مکمل اطلاعات پولیس کو ہی دیں گے۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: