نئی مردم شماری میں نئے سوالات! بوتل بند پانی سے لیکر اسمارٹ فون تک، جانیے اور کیا جانکاری مانگی جا سکتی ہے؟

نئی مردم شماری میں نئے سوال! بوتل بند پانی سے اسمارٹ فون تک، جانیے اور کیا جانکاری مانگی جا سکتی ہے

نئی مردم شماری میں نئے سوال! بوتل بند پانی سے اسمارٹ فون تک، جانیے اور کیا جانکاری مانگی جا سکتی ہے

New Census Questions: کووڈ 19 کی وجہ سے ملک میں 2021 کی مردم شماری کو روکنا پڑا تھا۔ جب سنہ 2021 کی مردم شماری دوبارہ شروع ہوگی تو لوگوں کو کچھ نئے سوالات کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ ان سوالات میں یہ بھی شامل ہو سکتا ہے کہ کیا آپ کے گھر میں بوتل بند پانی پینے کے پانی کا بنیادی ذریعہ ہے؟ کیا آپ کے کچن میں ایل پی جی یا پی این جی کنکشن ہے؟ گھر میں کتنے اسمارٹ فون یا ڈی ٹی ایچ کنکشن ہیں؟ آپ کے گھر میں کھائے جانے والا اہم اناج کون سا ہے؟

  • News18 Urdu
  • Last Updated :
  • New Delhi, India
  • Share this:
    نئی دہلی: ملک میں سنہ 2021 کی مردم شماری (Census 2021) کووڈ-19 (Covid) کی وبا کی وجہ سے روکنی پڑی تھی۔ ملک میں آبادی کا ڈیٹا اکٹھا کرنے کی اس معمول کی مشق کو دوبارہ شروع کرنے کے لیے نوٹیفکیشن جاری ہونا باقی ہے۔ اس وقت جب 2021 کی مؤخر شدہ مردم شماری بالآخر دوبارہ شروع ہو جائے گی، لوگوں کو کچھ نئی قسم کے سوالات کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ 'انڈین ایکسپریس' کی ایک خبر کے مطابق، ان سوالات میں یہ شامل ہو سکتا ہے کہ کیا آپ کے گھر میں بوتل بند پانی پینے کے پانی کا بنیادی ذریعہ ہے؟ کیا آپ کے کچن میں ایل پی جی یا پی این جی کنکشن ہے؟ گھر میں کتنے اسمارٹ فون یا ڈی ٹی ایچ کنکشن ہیں؟ آپ کے گھر میں کھائے جانے والا اہم اناج کون سا ہے؟

    یہ کچھ نئے سوالات ہیں جن پر نئی مردم شماری میں ڈیٹا اکٹھا کیا جائے گا۔ اپنے قیام کے 150 سال مکمل ہونے کے موقع پر، مردم شماری دفتر کو پیر کو اس کی نئی عمارت - جنگڑنا بھون (Janganana Bhawan) ملا۔ نئے دفتر کا افتتاح وزیر داخلہ امت شاہ نے کیا۔ اپنی 150ویں سالگرہ کے موقع پر مردم شماری کے دفتر نے ایک نئی اشاعت بھی جاری کی ہے۔ 1981 سے ہندوستانی مردم شماری پر ایک ٹریٹیز اس ہفتے کے شروع میں جاری کیا گیا تھا۔ اس اشاعت میں مردم شماری کی آخری چار کارروائیوں کے بارے میں تفصیلی معلومات شامل ہیں۔ اس میں 2021 کی مردم شماری کی تیاریوں کا ایک باب بھی ہے۔ جس میں پہلی بار جمع کی جانی والی معلومات بھی شامل ہیں۔ دیگر تازہ سوالات میں یہ شامل ہے کہ کیا "قدرتی آفات" خاندان کی نقل مکانی کی وجہ ہے۔

    ملک میں ہر گھر کی لسٹ بنانے کا کام مردم شماری کا پہلا حصہ ہے اور مردم شماری سال سے پہلے کے سال میں کیا جاتا ہے۔ 1 اپریل 2020 کو گھروں کی فہرست سازی کا کام شروع ہونے والا ہی تھا، تبھی کووڈ-19 وبائی بیماری کا پھیلنا شروع ہوا۔ مارچ 2020 میں ہندوستان میں کورونا وائرس کے کیسز سامنے آنا شروع ہوئے اور اسی سال 24 مارچ کو مکمل لاک ڈاؤن کر دیا گیا۔ جس کی وجہ سے مردم شماری روک دی گئی۔ تاہم 2021 کی مردم شماری کو بھی ڈیجیٹل شکل دینے کی کوشش کی جا رہی ہے۔ تاہم بعد میں ڈیٹا اکٹھا کرنے کے لیے الیکٹرانک ذرائع کے ساتھ روایتی کاغذی میڈیم استعمال کرنے کا فیصلہ لیا گیا۔
    Published by:sibghatullah
    First published: