ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

سسودیا نے دی صفائی- عام آدمی پارٹی نے الکا لامبا سے نہ استعفیٰ مانگا، نہ ہی کوئی استعفیٰ ہوا ہے

عام آدمی پارٹی کے نائب وزیر اعلی منیش سسودیا نے کی وضاحت

  • Share this:
سسودیا نے دی صفائی- عام آدمی پارٹی نے الکا لامبا سے نہ استعفیٰ مانگا، نہ ہی کوئی استعفیٰ ہوا ہے
دہلی کے نائب وزیر اعلی منیش سسودیا: فائل فوٹو۔

عام آدمی پارٹی کے سینئر لیڈر اور دہلی کے نائب وزیر اعلی منیش سسودیا نے سابق وزیر اعظم راجیو گاندھی سے بھارت رتن واپس لینے کی مانگ سے متعلق دہلی اسمبلی سے مبینہ طور پر منظور کی گئی تجویز سے ناراض پارٹی کی ایم ایل اے الکا لامبا سے استعفی مانگے جانے سے ہفتہ کے روز انکار کرتے ہوئے کہا کہ نہ تو ان سے استعفی مانگا گیا ہے نہ ہی کوئی استعفی ہوا ہے۔


لامبا نے ہفتہ کے روز اس معاملہ میں اپنی ناراضگی کا اظہار کرتے ہوئے کہا تھا کہ اروند کیجریوال نے ان سے ایم ایل اے عہدہ سے استعفی دینے کے لئے کہا ہے اور پارٹی سربراہ کے فیصلہ کو قبول کراستعفی دے دیں گی۔


وہیں دوسری جانب سسودیا نے صحافیوں کو بتایا کہ 1984 کے سکھ فسادات کو انصاف دلانے کے لئے اسمبلی میں گزشتہ دو دنوں سے چل رہی بحث کے دوران منظور کی گئی تجویز کو لے کر یہ متنازعہ پیدا ہوا تھا، جس میں سابق وزیر اعظم راجیو گاندھی کا بھارت رتن اِعزاز واپس لینے کی بات کہی گئی تھی۔ سسودیا نے یہ بھی کہا کہ ’’سابق وزیر اعظم کا بھارت رتن اعزاز واپس کرنے سے منسلک کسی تجویز کی پارٹی حمایت نہیں کرتی ہے‘‘۔


خیال رہے کہ دہلی اسمبلی میں جمعہ کو راجیو گاندھی کا بھارت رتن واپس لینے سے منسلک ایک تجویز منظور ہوئی ہے۔ اس تجویز کے خلاف احتجاج میں الکا لامبا نے ایوان سے واک آوٹ کر دیا تھا۔ واک آوٹ کے بعد انہوں نے کہا تھا کہ اس کا جو بھی نتیجہ ہو گا وہ اسے بھگتنے کے لئے تیار ہیں۔ حالانکہ، بعد میں عام آدمی پارٹی نے اس تجویز پر یوٹرن لے لیا۔

یہ بھی پڑھیں: الکا لامبا کی عام آدمی پارٹی سے چھٹی، ابتدائی رکنیت بھی منسوخ کردی گئی
First published: Dec 22, 2018 05:14 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading