உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    نیوز 18 رائزنگ انڈیا لائیو : پھر نظر آیا کنگنا کا بے باک انداز،لو۔بریک اپ اور مودی پرکھل کر رکھی رائے

    پہلے دن وزیر اعظم مودی نے جہاں 2022 تک کیلئے اپنا ویزن پیش کیا وہیں آج وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ بھارت اودے ( طلوع ہندستان ) کے خواب کو در پیش چیلنجوں پر بات چیت کریں گے ۔

  • News18 Urdu
  • | March 17, 2018, 21:05 IST
    facebookTwitterLinkedin
    LAST UPDATED 4 YEARS AGO

    AUTO-REFRESH

    HIGHLIGHTS

    20:51 (IST)

    مجھے اب تک کسی کو دھوکہ دینا کا موقع نہیں ملا ۔ہر مرتبہ مھجے ہی دھوکہ ملتا ہے۔وہ لوگ واپس آتے ہیں لیکن میں انہیں نہیں اپناتی کیونکہ تب تک مجھے دوسرا لوزر مل چکا ہوتا ہے۔کنگنا رنوت

    20:50 (IST)

    میرا بوائے فرینڈ پوچھتا ہیکہ مجھے اس کی زندگی کے بارے میں سب کچھ کیسے پتہ چلتا ہے۔یہ ٹیلی پیتھی ہے یا شاید بلیک میجک ۔میرے پیار کو لوگ سائکو لو کہتے ہیں۔ٹھیک ہے ہرتک روشن کنٹروورسی پر کنگنا نے کہا کہ وہ اس قصے کو پیچھے چھوڑ چکی ہیں اور انہیں اس سے کوئی فرق نہیں پڑتا کہ لوگ انہیں وچ کہتے ہیں۔

    20:35 (IST)

    سینسر بورڈ چیف بننے پر کیسی فلمیں بنائیں گی اس پر کنگنا نے کہا کہ اس پوسٹ کیلئے پرسون جوشی صحیح شخص ہیں۔انہوں نے کہا کہ وہ کبھی پرسون جوشی نہیں ہو سکتی ہیں۔کنگنا رنوت

    20:33 (IST)

    میرے کئی افیئر رہے ہیں۔ہر بریک اپ کے بعد لگتا ہیکہ اب میری لو لائف ختم ہو گئی ۔میرا پیار صرف جسمانی نہیں ہے،یہ روحانی بھی ہے۔یہ ایک بہترین تجربہ ہے۔کنگنا رنوت

    20:29 (IST)

    جس طرح کا کام میں کرنا چاہتی ہوں میں ب بھی کر رہی ہوں ۔جن لوگوں کے ساتھ میں کریئیولی جڑنا چاہتی ہوں وہ اب بھی میرے ساتھ ہیں۔اور جنہیں فرق نہیں پڑتا وہ نہیں ہیں ۔کنگنا رنوت

    20:29 (IST)

    میرے سامنے کوئی گپ شپ نہیں کرتا ۔سب کو ڈر لگتا ہے کہ اس کے سامنے بولیں گے تو پتہ نہیں کہاں،کس کے سامنے،کس اسٹج پر بول دیگی۔کنگنا

    20:25 (IST)

    کنگنا رنوت سے جب پوچھا گیا کہ کیا کھل کر بات رکھنے کی انہیں کوئی قیمت چکانی پری؟اس پر کنگنا نے کہا کی اس کی وجہ سے انہیں کافی ٹینشن ہوتی ہے۔انہوں نے کہا ان پر کئی مرتبہ ایسے الزام لگائے گئے جن کے چلتے انہیں جیل بھی ہو سکتی تھی۔میں کئی بار ڈر بھی جاتی ہوں"۔

    20:18 (IST)


    آپ کچھ کہتے ہیں تو اس کا نقصان کیا ہوتا ہے؟جیسے جب سورا بھاسکر نے سنجے لیلا بھنسالی کو خط لکھا تو انہیں ٹرول کیا گیا۔اس پر کنگنا نے کہا ،"وہ کافی اچھے طریقے سے لکھا گیا پیس تھا۔میں سورا سے متفق نہیں ہوں لیکن وہ پیس کافی اچھا لکھا تھا۔لیکن جس طرح سے انہیں ٹرول کیا گیا وہ غلط تھا"۔کنگنا نے آگے کہا کہ"لوگ کہنے لگے کہ اسے اٹینشن چاہئے ،ارے یار تو دیدو اٹینشن۔لوگ اس حد تک گئے کہ اگر وہ سلٹ کا رول پلے کر سکتی ہے تو وہ کیا جانے ویجائنا کیا ہوتا ہے؟یہ بہت غلط ہے ،یہ سماج کے طور پر ہمارا نقصان ہے"۔

    20:14 (IST)

    میں مودی کی بڑی فین ہوں ،میں بہت زیادہ نیوز پیپر نہیں پڑھتی ہوں پر وہ ایک سکسیز اسٹوری ہیں۔ایک عام آدمی ،ایک چائے والا آج ملک کا پی ایم ہے۔یہ ان کی نہیں ملک کی جمہوریت کی جیت ہے۔دنیا پرفیکٹ نہیں ہو سکتی لیکن اسے ہم بیلنس بنا سکتے ہیں۔کنگنا رنوت

    20:9 (IST)

    مجھے لگتا ہیکہ لوگ آپ میں امتیازپیدا کرتے ہیں تو اس میں برائی نہیں ہے۔بڑی مشکل یہ ہیکہ ہم اپنی زندگی میں کچھ پرسیپشن لیکر چلتے ہیں۔میں جب یہ جھیل رہی تھی تب میں نے اس باری میں شکایت نہیں کی۔میں نے تب کہا جب میں کچھ بن گئی ۔دنیا آپ کے لئے فیئر نہیں ہوگی۔کنگنا رنوت

    ملک کے سب سے برے میڈیا گروپ نیٹ ورک 18 کی رائزنگ انڈیا سمٹ کی شروعات ہوچکی ہے ۔ پہلے دن وزیر اعظم مودی نے جہاں 2022 تک کیلئے اپنا ویزن پیش کیا وہیں دوسرے دن وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ بھارت اودے ( طلوع ہندستان ) کے خواب کو در پیش چیلنجوں پر روشنی ڈالی ۔ داخلی سلامتی پر بات کرتے ہوئے راجناتھ سنگھ نے کہا کہ نکسلی محاذ پر ملک کو بڑی کامیابی ملی ہے ۔ وہیں انہوں نے کہا کہ جے این یو ایک تعلیمی ادارہ ہے اور اسے وہ ملک کی داخلی سلامتی کیلئے خطرہ نہیں مانتے ہیں۔
    نوبیل انعام یافتہ پال کروگمین نے اس بات پر زور دیا کہ اگلے کچھ سالوں میں ہندوستان ایک سپر پاور بن کر ابھرے گا ۔ انہوں نے کہا کہ معیشت کے معاملہ میں ہندوستان صرف چین اورامریکہ سے پیچھے ہے ۔ انہوں نے کہا کہ چین کی کام کاجی آبادی اپنے عروج پر ہے اور کچھ وقت میں وہ کم ہوجائے گی جبکہ ہندوستان میں کام کاجی آبادی مسلسل بڑھ رہی ہے۔
    مارگن اسٹینلی کے چیف روچر شرما نے کہا کہ گلوبل ٹرینڈس کو دیکھتے ہوئے فی الحال ہندوستان کا 8-10 فیصد شرح ترقی حاصل کرنا ممکن نہیں ہے ۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے بٹکوائن میں سرمایہ کاری نہ کرنے کا بھی مشورہ دیا ۔
    بالی ووڈ اداکار رنویر سنگھ نے بالی ووڈ میں اپنے کیریئر اور فلم پدماوت تنازع پر اپنی بات رکھی ۔ اس کے علاوہ فلمی ستارہ کنگنا رناوت بھی اپنی موجودگی درج کرائیں گی۔
    اس سمٹ کے توسط سے سیاست ، تجارت ، انتظامیہ ، آرٹس اور تعلیم کے شعبہ کی قومی و بین الاقوامی شخصیات کو ایک چھت کے نیچے جمع کیا جارہا ہے۔اب دوسرے دن یوپی کے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ ، مرکزی وزیر اسمرتی ایرانی ، چندا کوچر ، نرملا سیتا رمن اور کیپٹن امریندر سنگھ وغیرہ بھی پروگرام میں شریک ہوں گے اپنی بات رکھیں گے ۔
    رائزنگ انڈیا کے لائیو اپ ڈیٹس کیلئے ہمارے ساتھ جڑے رہیں ۔