உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جامعہ ملیہ اسلامیہ کے آف لائن موڈ میں کھلنے کی خبر فرضی ، یونیورسٹی نے کہی یہ بات

    جامعہ ملیہ اسلامیہ کے آف لائن موڈ میں کھلنے کی خبر فرضی ، یونیورسٹی نے کہی یہ بات

    جامعہ ملیہ اسلامیہ کے آف لائن موڈ میں کھلنے کی خبر فرضی ، یونیورسٹی نے کہی یہ بات

    یونیورسٹی کے رابطہ عامہ کے افسراحمد عظیم کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ اس طرح کی خبر غلط ہے ۔ فی الحال یونیورسٹی کی جانب سے اس طرح کا کوئی قدم نہیں اٹھایا گیا ہے ۔ غور طلب ہے کہ کہ سوشل میڈیا خاص طور سے واٹس اپ گروپ میں ایک سرکلر آرڈر دیکھا گیا تھا ۔

    • Share this:
    نئی دہلی : جامعہ ملیہ اسلامیہ کی جانب سے سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہے اس سرکلر آرڈر کو مسترد کردیا گیا ہے اور اس خبر کو غلط قرار دیا گیا ہے ، جس میں کہا گیا تھا کہ یونیورسٹی میں تعلیمی سرگرمیاں اب ان لائن طریقہ کی بجائے فزیکل انداز میں ہوں گی ۔ جامعہ انتظامیہ کی جانب سے بیان جاری کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ اس طرح کا سرکلر آرڈر پوری طرح سے غلط اور فرضی ہے ۔

    یونیورسٹی کے رابطہ عامہ کے افسراحمد عظیم کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ اس طرح کی خبر غلط ہے ۔ فی الحال یونیورسٹی کی جانب سے اس طرح کا کوئی قدم نہیں اٹھایا گیا ہے ۔ غور طلب ہے کہ کہ سوشل میڈیا خاص طور سے واٹس اپ گروپ میں ایک سرکلر آرڈر  دیکھا گیا تھا ۔

    اس آرڈر میں لکھا گیا ہے کہ 7 جون 2019 کے آرڈر کی کڑی میں اس آرڈر کو جاری کیا جا رہا ہے اور یہ  نوٹس کیا جا رہا ہے کہ کالج سینٹرز اور شعبہ جات کے طریقہ سے کام کریں گے ۔ تدریسی اسٹاف ،اور غیر تدریسی ملازمین ، طلبہ اور طالبات دفاتر اور کلاسوں میں  جسمانی طور پر موجود رہیں گے ۔ 16 اگست سے آف لائن سرگرمیاں شروع ہو جائیں گی ۔ اس دوران کورونا وبا کو روکنے کے لیے تمام طرح کی احتیاط اور پروٹوکول پر عمل پیرا ہونا ضروری ہوگا ۔

    اس سرکلر آرڈر میں سائنس پروگرام کے لیے ہی فزیکل انداز میں یونیورسٹی کے ورک کرنے کی بات کی گئی ہے ۔ جبکہ دوسرے تمام شعبہ جات اور فیکلٹیوں میں آن لائن موڈ میں تعلیمی سرگرمیاں جاری رہنے کی بات کی گئی ہے ۔ غور طلب ہے کہ فی الحال جامعہ ملیہ اسلامیہ میں میں مقابلہ جاتی امتحانات کا دور جاری ہے ، جس کے تحت پہلے داخلہ سے متعلق سرگرمیاں ہو رہی ہیں ۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: