உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    News18india Chaupal: انوراگ ٹھاکر کا راہل گاندھی پر نشانہ، کہا- ہم بحث کے لیے تیار ہیں، وہ ایوان میں تو آئیں

    News18india Chaupal: ۔ یوز 18 انڈیا چوپال کے پروگرام میں انہوں نے کہا کہ ہم 2014 سے آج تک بات چیت کے لیے تیار تھے اور کرتے بھی رہے ہیں لیکن راہل گاندھی کبھی ایوان میں تو آئیں ۔

    News18india Chaupal: ۔ یوز 18 انڈیا چوپال کے پروگرام میں انہوں نے کہا کہ ہم 2014 سے آج تک بات چیت کے لیے تیار تھے اور کرتے بھی رہے ہیں لیکن راہل گاندھی کبھی ایوان میں تو آئیں ۔

    News18india Chaupal: ۔ یوز 18 انڈیا چوپال کے پروگرام میں انہوں نے کہا کہ ہم 2014 سے آج تک بات چیت کے لیے تیار تھے اور کرتے بھی رہے ہیں لیکن راہل گاندھی کبھی ایوان میں تو آئیں ۔

    • Share this:
      نئی دہلی. مرکزی وزیر کھیل انوراگ ٹھاکر  (Anurag Thakur) نے جمعرات کو کانگریس اور وایناڈ کے ایم پی راہل گاندھی  (Rahul Gandhi) کو نشانہ بنایا۔ نیوز 18 انڈیا چوپال کے پروگرام میں انہوں نے کہا کہ ہم 2014 سے آج تک بات چیت کے لیے تیار تھے اور کرتے بھی رہے ہیں لیکن راہل گاندھی کبھی ایوان  میں تو آئیں ۔ حکومت کی پالیسیوں کی مخالفت آپ دلائل کے ساتھ کر سکتے ہیں، اپوزیشن کے پاس تعداد کم ہو تو  بھی حکومت کو گھیرا جا سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ششی تھرور کو خواتین ممبران پارلیمنٹ کا احترام کرنا چاہئے، انہوں نے جو بھی ٹویٹ کیا اس سے پتہ چلتا ہے کہ کانگریس کی ترجیح کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایس پی کے دور میں فسادات ہوتے تھے، ہم کھیلوں کو فروغ دینے کے لیے دنگل کراتے ہیں۔ اکھلیش یادو کے لیے ٹوپی اہم ہے، ہمارے لیے روزی روٹی اہم ہے۔

      انوراگ ٹھاکر نے کہا، 'میں 1991 میں پہلی بار ایودھیا گیا تھا اور اب جب میں ایودھیا یا کاشی جاتا ہوں تو ایسا لگتا ہے کہ ملک کے لوگ واقعی اس لمحے کا انتظار کر رہے تھے، جو ہم نے دیا ہے۔ یوپی اب معیشت اور کاروبار کرنے میں آسانی میں ملک میں دوسرے نمبر پر ہے۔ پہلے تاجر گولیاں کھاتے تھے، لیکن اب مختار انصاری اور عتیق احمد جیسے لوگ گولی مارنے والے خوفزدہ ہیں جن کے خلاف سی ایم یوگی آدتیہ ناتھ نے کارروائی کرنے کی ہمت دکھائی ہے۔

      انہوں نے کہا، 'مودی حکومت یا یوگی حکومت سب کا ساتھ، سب کا وشواس، سب کا پریاس کی بنیاد پر آگے بڑھی۔ مسلم کمیونٹی کے لوگوں کو پی ایم آواس، اجولا یوجنا، بیت الخلاء کا سب سے زیادہ فائدہ ملا ہے۔ اکھلیش یادو ہوں، مایاوتی ہوں یا پھر پرینکا گاندھی، یہ لوگ خوشامد کی سیاست کر رہے ہیں۔ ہمارا کام ترقی لانا ہے، ہم اس کے لیے سیاست کرتے ہیں۔

      انوراگ ٹھاکر نے کہا، '2014، 2017 اور 2019 میں یوپی کے لوگوں نے ذات پات اور مذہب سے بالاتر ہوکر ووٹ دیا۔ لوگوں نے ایک ایماندار حکومت کو منتخب کرنے کے لیے، ایک مضبوط لیڈر کو منتخب کرنے کے لیے ووٹ دیا ہے۔ اگر سوچ ایماندار ہے اور کسی نے مضبوط کام کیا ہے تو یوگی آدتیہ ناتھ نے کیا ہے۔ انہوں نے کہا، 'مودی حکومت میں ایک بھی کسان کو گولی نہیں لگی اور نہ ہی کسی کسان کی گولی لگنے سے موت ہوئی ہے۔ کسانوں کو احتجاج کا حق ہے۔ حکومت کا کام چرچا کرکے  فیصلہ کرنا ہوتا ہے۔ ہم نے بات کی، اگر وہ نہ نہیں مانے  تو ملک کے  مفاد میں قوانین واپس لے لیے گئے۔ جموں و کشمیر سے آرٹیکل 370 اور 35A ہمیشہ کے لیے ختم ہو گئے ہیں۔

      انوراگ ٹھاکر نے کہا، '2014، 2017 اور 2019 میں یوپی کے لوگوں نے ذات پات اور مذہب سے بالاتر ہوکر ووٹ دیا۔ لوگوں نے ایک ایماندار حکومت کو منتخب کرنے کے لیے، ایک مضبوط لیڈر کو منتخب کرنے کے لیے ووٹ دیا ہے۔ اگر سوچ ایماندار ہے اور کسی نے مضبوط کام کیا ہے تو یوگی آدتیہ ناتھ نے کیا ہے۔ انہوں نے کہا، 'مودی حکومت میں ایک بھی کسان کو گولی نہیں لگی اور نہ ہی کسی کسان کی گولی لگنے سے موت ہوئی ہے۔ کسانوں کو احتجاج کا حق ہے۔ حکومت کا کام چرچا کرکے  فیصلہ کرنا ہوتا ہے۔ ہم نے بات کی، اگر وہ نہ نہیں مانے  تو ملک کے  مفاد میں قوانین واپس لے لیے گئے۔ جموں و کشمیر سے آرٹیکل 370 اور 35A ہمیشہ کے لیے ختم ہو گئے ہیں۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: