اپنا ضلع منتخب کریں۔

    لدھیانہ کورٹ بم بلاسٹ کا اہم سازش رچنے والے دہشت گرد ہرپریت کو NIA نے کیا گرفتار

     این آئی اے نے اسے نئی ​​دہلی کے اندرا گاندھی بین الاقوامی ہوائی اڈے سے گرفتار کیا ہے۔ ہیپی ملیشیا پنجاب کے ضلع امرتسر کے گاؤں میادی کالا کا رہائشی ہے۔

    این آئی اے نے اسے نئی ​​دہلی کے اندرا گاندھی بین الاقوامی ہوائی اڈے سے گرفتار کیا ہے۔ ہیپی ملیشیا پنجاب کے ضلع امرتسر کے گاؤں میادی کالا کا رہائشی ہے۔

    این آئی اے نے اسے نئی ​​دہلی کے اندرا گاندھی بین الاقوامی ہوائی اڈے سے گرفتار کیا ہے۔ ہیپی ملیشیا پنجاب کے ضلع امرتسر کے گاؤں میادی کالا کا رہائشی ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | Ludhiana
    • Share this:
      این آئی اے کو بڑی کامیابی ملی ہے۔ این آئی اے نے انتہائی مطلوب دہشت گرد ہرپریت سنگھ عرف ہیپی ملیشیا کو گرفتار کرلیا ہے۔ ہرپریت سنگھ لدھیانہ کورٹ بم دھماکہ کیس کی سازش رچنے میں اہم کردار میں تھا۔ این آئی اے نے اسے نئی ​​دہلی کے اندرا گاندھی بین الاقوامی ہوائی اڈے سے گرفتار کیا ہے۔ ہیپی ملیشیا پنجاب کے ضلع امرتسر کے گاؤں میادی کالا کا رہائشی ہے۔

      واضح رہے کہ دسمبر 2021 میں لدھیانہ ڈسٹرکٹ کورٹ میں بم دھماکہ ہوا تھا۔ اس دھماکے میں پنجاب پولیس کا ایک برطرف ملازم گگندیپ سنگھ مارا گیا تھا۔ اس کے ساتھ ہی اس واقعے میں چھ دیگر افراد زخمی بھی ہوئے تھے۔ اس سے متعلق کیس 23 دسمبر 2021 کو ضلع لدھیانہ کمشنریٹ، پنجاب میں درج کیا گیا تھا۔ اسی وقت، این آئی اے نے 13 جنوری 2021 کو کیس کو دوبارہ رجسٹرڈ کیا تھا۔



      تفتیش سے معلوم ہوا کہ انتہائی مطلوب دہشت گرد ہیپی ملیشیا لکھبیر سنگھ روڈے کا ساتھی تھا۔ لکھبیر سنگھ روڈ پاکستان میں واقع ISYF (انٹرنیشنل سکھ یوتھ فیڈریشن) کا سربراہ ہے۔ ہیپی روڈ کے ساتھ وہ لدھیانہ کورٹ کمپلیکس دھماکے کے سازش رچنے والوں میں سے ایک تھا۔ روڈ کی ہدایات پر عمل کرتے ہوئے ہیپی نے اپنی مرضی کے مطابق آئی ای ڈی ڈلیور کی تھی۔ اسے پاکستان سے ہندوستان بھیجا گیا تھا۔ یہ لدھیانہ کورٹ کمپلیکس دھماکے میں استعمال ہوا تھا۔

      اہم بات یہ ہے کہ گرفتار دہشت گرد ہیپی ملائیشیا بھی بارودی مواد، اسلحہ اور منشیات کی اسمگلنگ سمیت مختلف مقدمات میں مطلوب تھا۔ اس سے قبل اس سال ستمبر میں این آئی اے نے ان پر 10 لاکھ روپے کے انعام کا اعلان کیا تھا۔ اس کے ساتھ ہی این آئی اے کی خصوصی عدالت نے ہیپی کے خلاف غیر ضمانتی وارنٹ بھی جاری کیا تھا۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: