ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

دہلی : شاہی عیدگاہ قصاب پورہ ، جامع مسجد اور مسجد فتح پوری ، کہیں بھی نہیں ہوگی عید کی نماز

شاہی امام احمد بخاری میں نیوز 18 سے بات کرتے ہوئے کہا کہ اس مرتبہ رمضان ، جمعۃ الوداع اور عید الفطر روایتی انداز میں نہیں منائی جائے گی ۔ لیکن خوشحال لوگ ضرورت مندوں کی مدد کریں ۔

  • Share this:
دہلی : شاہی عیدگاہ قصاب پورہ ، جامع مسجد اور مسجد فتح پوری ، کہیں بھی نہیں ہوگی عید کی نماز
دہلی : شاہی عیدگاہ قصاب پورہ ، جامع مسجد اور مسجد فتح پوری ، کہیں بھی نہیں ہوگی عید کی نماز

ملک میں کورونا وائرس کے خلاف جنگ کی وجہ سے مذہبی عبادت گاہوں پر تالا لگا ہوا ہے اور لوگوں کے جمع ہونے کی تمام سرگرمیاں موقوف کر دی گئی ہیں ۔ شاہی عیدگاہ قصاب پورہ میں بھی کل عید کی نماز نہیں ہوگی ۔ عیدگاہ کے امام مفتی حنیف قریشی نے نماز نہ ہونے کی تصدیق کی ہے ۔ مفتی حنیف قریشی نے موجودہ حالات کے تناظر میں نماز نہ ہونے اور میڈیکل ایمرجنسی کے دوران احتیاطی تدابیر اختیار کرنے پر زور دیا ہے ۔ وہیں دوسری جانب دہلی کی شاہی جامع مسجد میں بھی عید کی نماز نہیں ہوگی ۔ مسجد کا عملہ اور شاہی امام احمد بخاری عید کی نماز ادا کریں گے ۔ اسی طرح سے مسجد فتح پوری میں بھی نماز ادا کی جائے گی ، لیکن عام لوگوں کے لیے جمع ہونے اور نماز کی اجازت نہیں ہوگی ۔


شاہی امام احمد بخاری میں نیوز 18 سے بات کرتے ہوئے کہا کہ اس مرتبہ رمضان ، جمعۃ الوداع اور عید الفطر روایتی انداز میں نہیں منائی جائے گی ۔ لیکن خوشحال لوگ ضرورت مندوں کی مدد کریں ۔  سادگی کے ساتھ عید منائیں اور خاص طور سے یتیموں کو عید کی خوشیوں میں شامل کریں ۔ شاہی امام نے کہا کہ جو گائیڈ لائن ہماری حکومت اور مرکزی وزارت صحت نے جاری کی ہیں اور عالمی ادارہ صحت کی طرف سے احتیاطی اقدامات کے لئے کہا گیا ہے ، تمام لوگوں کو اس پر عمل کرنا چاہئے ۔  کیونکہ کورونا وائرس سے ہمیں خود کو بچانا ہے ۔ بازاروں میں بلا ضرورت نہ جائیں اور احتیاط کریں۔ شاہی امام احمد بخاری نے کہا کہ لوگوں کو گلے ملنے اور ہاتھ ملانے سے بھی اجتناب کرنا چاہئے ۔


وہیں دوسری جانب جمیعت علما ہند کے صدر مولانا ارشد مدنی نے بھی لوگوں سے گھروں میں چاشت کی نماز ادا کرنے کی اپیل کی ہے ۔ ارشد مدنی نے کہا کہ مسلمانوں نے بالخصوص رمضان المبارک کے مہینہ میں فرض نمازوں اور جمعہ وتراویح کی ادائیگی میں ہیلتھ منسٹری کی ہدایات پر جس طرح عمل کیا ہے ، وہ بے مثال ہے ۔ اب چونکہ رمضان المبارک اپنے اختتام کو پہنچ رہا ہے ، اس لئے عیدالفطر کی نماز کو قائم کرنے کا مسئلہ بھی عوام کے لئے پریشان کن ہے ۔


واضح رہے کہ نماز عید الفطر کے سلسلہ میں دارالعلوم دیوبند کی جانب سے فتویٰ منظرعام پر آچکا ہے ۔ اس کا حاصل یہ ہے کہ عید کی نماز بھی جمعہ کی طرح ادا کی جاسکتی ہے ۔ کیونکہ عید کی نمازکے لئے بھی وہیں شرائط ہیں ، جو جمعہ کے لئے ہیں ۔ اس لئے اس کی پوری کوشش کی جائے کہ شرعی شرائط اور حکومت کی طرف سے جاری کردہ ہدایات کوملحوظ رکھتے ہوئے عید کی نمازادا کی جائے ۔ اگر کسی جگہ اس کے امکانات نہیں ہیں ، تو ان کے لئے بہتر ہے کہ چاررکعت چاشت کی نفل نماز پڑھ لیں ۔
First published: May 24, 2020 09:43 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading