உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پرانے نوٹ رکھنے پر اب نہیں ہوگی جیل ، مگر کم از کم دس ہزار روپے دینا ہوگا جرمانہ

    ارون جیٹلی، وزیر خزانہ: فائل فوٹو

    ارون جیٹلی، وزیر خزانہ: فائل فوٹو

    حکومت نے نوٹ بندی کو لے کر پھر اپنے فیصلے میں تبدیلی کی ہے۔ حکومت کے اس فیصلہ کے مطابق اب پرانے نوٹ رکھنے پر سزا نہیں ہوگی۔

    • Share this:
      نئی دہلی : حکومت نے نوٹ بندی کو لے کر پھر اپنے فیصلے میں تبدیلی کی ہے۔ حکومت کے اس فیصلہ کے مطابق اب پرانے نوٹ رکھنے پر سزا نہیں ہوگی۔ تاہم 31 مارچ 2017 کے بعد آپ کے پاس پرانے نوٹ ملتے ہیں ، تو 10 ہزار کا جرمانہ لگ سکتا ہے۔
      خیال رہے کہ قبل ازیں کابینہ نے اعلان کیا تھا کہ جس کے پاس طے تاریخ کے بعد بھی 500 اور 1000 کے دس سے زیادہ پرانے نوٹ ملیں گے ، انہیں سزا ہو سکتی ہے۔ تاہم یہ واضح نہیں کیا تھا کہ یہ طے تاریخ 30 دسمبر ہوگی یا پھر 31 مارچ۔ لیکن حکومت نے اب اپنے اس فیصلے کو واپس لے لیا ہے۔
      جمعرات کو نوٹ بندی کو 51 دن ہوگئے اور 50 دنوں کی میعاد بھی ختم ہوگئی ، لیکن ملک میں نقدی کی قلت برقرار ہے۔ اے ٹی ایم اور بینک کے باہر اب بھی قطاریں لگ رہی ہیں۔ گرچہ قطاروں کی لمبائی ضرور کم ہوئی ہے، لیکن کیش کے لئے ابھی بھی لوگ پریشان ہی ہیں۔
      First published: