உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    رمضان: دہلی کی جیلوں میں مسلمانوں کے ساتھ ہندو بھی رکھ رہے ہیں روزہ

    علامتی تصویر

    علامتی تصویر

    تہاڑ جیل انتظامیہ نے بتایا کہ دہلی جیل کے سنٹرل جیل میں بند 16،665 قیدیوں میں سے 2،658 قیدی روزے رکھ رہے ہیں۔

    • Share this:
      دہلی کی جیلوں میں 100 سے زائد ہندو قیدی مسلم قیدیوں کے ساتھ رمضان المبارک کے دوران روزے رکھ رہے ہیں۔ تہاڑ جیل انتظامیہ نے بتایا کہ دہلی جیل کے سنٹرل جیل میں بند 16،665 قیدیوں میں سے 2،658 قیدی روزے رکھ رہے ہیں۔ 2،658 قیدیوں میں سے 110 ہندو ہیں۔ تہاڑ جیل انتظامیہ کے مطابق 31 ہندو خواتین قیدی اور 12 ہندو نوجوان قیدی رمضان کے مہینے میں روزے رکھ رہے ہیں۔

      جیل حکام کے مطابق 'سحری' اور دیگر نماز کو دیکھتے ہوئے مقررہ خوراک کی دستیابی کو یقینی بنانے کے لئے 'لنگر' کے وقت میں تبدیلی کی گئی ہے۔ حکام نے بتایا کہ قیدیوں کی کینٹین میں روح افزا، کھجور اور تازہ پھلوں کا کافی ذخیرہ ہے جسے قیدی خرید سکتے ہیں۔ تمام مرکزی جیلوں میں 'روزہ افطار'كے بھی انتظامات کئے گئے ہیں۔

      انہوں نے کہا کہ مذہبی اور خیراتی تنظیموں کو جیل کے اندر قیدیوں کے ساتھ نماز اور 'روزہ افطار' کے اہتمام کرنے کی اجازت ہے۔ اس میں عام حفاظتی احتیاطی تدابیر اپنائی جائیں گی۔  دلی کی جیلوں میں تین جیل تہاڑ، روہنی اور منڈولی جیل ہیں۔
      First published: