ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

سوچھ بھارت مشن:دہلی میں نہیں بنا ایک بھی بیت الخلا،کیجریوال حکومت نے نہیں دئے پیسے

سی اے جی کی ایک رپورٹ میں منگل کو کہا گیا کہ سڑھے تین سال پہلے سوچھ بھارت مہم کی شروعات ہونے کےبعد سے دہلی میں ایک بھی بیت الخلاء نہیں بنایا گیا ہے۔اس کام کیلئے تعین کی گئی40.31کروڑ کی رقم بیکار پڑی ہوئی ہے۔

  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
سوچھ بھارت مشن:دہلی میں نہیں بنا ایک بھی بیت الخلا،کیجریوال حکومت نے نہیں دئے پیسے
سی اے جی کی ایک رپورٹ میں منگل کو کہا گیا کہ سڑھے تین سال پہلے سوچھ بھارت مہم کی شروعات ہونے کےبعد سے دہلی میں ایک بھی بیت الخلاء نہیں بنایا گیا ہے۔اس کام کیلئے تعین کی گئی40.31کروڑ کی رقم بیکار پڑی ہوئی ہے۔

سی اے جی کی ایک رپورٹ میں منگل کو کہا گیا کہ سڑھے تین سال پہلے سوچھ بھارت مہم کی شروعات ہونے کےبعد سے دہلی میں ایک بھی بیت الخلاء نہیں بنایا گیا ہے۔اس کام کیلئے تعین کی گئی40.31کروڑ کی رقم بیکار پڑی ہوئی ہے۔دہلی اسمبلی میں سی اے جی کی رپورٹ کے مطابق مہم کا فنڈ مختص نہیں کیا ۔


اس میں کہا گیا ہیکہ دہلی کے تینوں نگر نگم ،دہلی شہر،ڈی یو ایس آئی بی سمیت امپلیمینٹیشن ایجنسیوں کو ریاست کا حصہ 10۔08 کروڑ روپئے سمیت 40.31 کروڑ روپئے حاصل ہوئے لیکن مارچ 2017 تک اس پیسے کا استعمال نہیں کیا گیا۔


سی اے جی کی رپورٹ کے مطابق این ڈی ایم سی اور ڈی سی بی گھریلو بیت الخلاء کی ضرورت کا تخمینہ نہیں کر پائی لیکن گھریلو بیت الخلا کی تعمیر کیلئے انہیں 16.92 کروڑ روپئے جاری کئے گئے۔اس نے کہا کہ شہر میں جھگی ،جھوپڑی اور جے جے کلسٹر کو کھلے میں بیت الخلا مفت بنانے کیلئے ذمہ دار ایجنسی ڈی یو ایس آئی بی کو دہلی حکومت سے ریاست کا حصہ نہیں ملا۔


toilets2
رپورٹ کے مطابق ڈی یو ایس آئی بی کو جنوری 2016 تک 6۔86 کروڑ روپئے ملے ۔جس میں ریاست کا 1071 روپئے کچھ لاگت کا 25 فیصدی کا حصہ بھی شامل تھا جبکہ اسے 41۔49 کروڑ روپے کی ضرورت تھی۔
First published: Apr 03, 2018 09:59 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading