ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

لاک ڈاون اور تعلیم کی فراہمی ، لکھنو میں بچوں کے لئے شروع کئے گئے سمر کیمپس

سی ایم ایس کے بانی اور ماہر تعلیم جگدیش گاندھی کہتے ہیں کہ بچے ہمارے ملک کا مستقبل ہیں اور ان کے وقت اور صلاحیتوں کا استعمال کرنا ہمارا اخلاقی و سماجی فریضہ ہے ۔

  • Share this:
لاک ڈاون اور تعلیم کی فراہمی ، لکھنو میں بچوں کے لئے شروع کئے گئے سمر کیمپس
لاک ڈاون اور تعلیم کی فراہمی ، لکھنو میں بچوں کے لئے شروع کئے گئے سمر کیمپس

لکھنئو : لاک ڈاون کے درمیان وقت سے پہلے اسکول کالج اور دیگر تمام  تعلیمی ادارے بند ہوجانے کے سبب تعلیمی نظام بڑے پیمانے پر متاثر ہوا ہے ۔ سرکاری اسکولوں سے لے کر پرائیویٹ تعلیمی مراکز اور مدارس اسلامیہ تک سبھی پر جمود طاری ہوگیا ۔ حالانکہ اس دوران کچھ اسکولوں اور اداروں نے بچوں کو تعلیمی نقصان سے بچانے اور کورونا کی وبا سے محفوظ رکھنے کے لئے آن لائن تعلیم فراہمی کا نظم بھی قائم کیا ، جس میں سی ایم ایس جیسے بڑے ادارے خاطر خواہ کامیاب بھی نظر آئے ۔ لیکن بیشتر سرکاری و غیر سرکاری اسکول کے بچوں کا وسائل نہ ہونے کے سبب خسارہ بھی ہوا ۔


سی ایم ایس نے اپنے سبھی تعلیمی اداروں میں آن لائن کلاسز کے ساتھ ہی اب فری سمر کیمپس کے ذریعہ بچوں کی صلاحیتوں کو بروئے کار لانے اور انہیں محفوظ و مصروف رکھنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ مزید بہتر بات یہ ہے بھی ہے کہ یہ آن لائن سمر کیمپس بچوں کے لئے بغیر کسی فیس کے شروع کئے گئے ہیں ، جو آئندہ دس جون تک جاری رہیں گے ۔ سی ایم ایس کے بانی اور ماہر تعلیم جگدیش گاندھی کہتے ہیں کہ بچے ہمارے ملک کا مستقبل ہیں اور ان کے وقت اور صلاحیتوں کا استعمال کرنا ہمارا اخلاقی و سماجی فریضہ ہے ۔ اسی کے پیش نظر سی ایم ایس کی سبھی برانچوں میں بچوں کے لئے آن لائن فری سمر کیمپس شروع کئے گئے ہیں ، جن کے ذریعہ بچے اپنے گھروں پر رہ کر اپنی خواہش طبیعت اور رجحان کے حساب سے من پسند کام سیکھ سکتے ہیں ۔ ان سمر کیمپس میں آرٹ ، کرافٹ ، گائیکی ، گلوکاری ، موسیقی ، رقص ، ڈھولک ، ستاروادن کسرت ، صحت ، یوگ ، ادھیاتم ، بنائی ، سلائی ، کٹائی ، پینٹنگ اور  بہت سی ایسی چیزیں سکھائی جارہی ہیں ، جن کے ذریعہ بچے چھٹیوں کا صحیح استعمال کرسکتے ہیں ۔


سی ایم ایس کے انٹرنیشنل ریلیشن ہیڈ شِشر شریواستو نے بنیادی معلومات فراہم کرتے ہوئے یہ بھی واضح کیا کہ جگدیش جی کی جانب سے سبھی اسٹاف کو یہ ہدایات جاری کی گئی ہیں کہ وہ حکومت کی طرف سے جاری کئے اصولوں اور ضابطوں کا مکمل لحاظ و پاس رکھتے ہوئے ایسا تعلیمی نظام قائم کریں ، جو ہمارے بچوں اور ہمارے سماج دونوں کے لئے بہتر ہو ۔ کیوں کہ اچھے اور صحت مند بچوں کے ساتھ ہی ایک صحت مند سماج اور ملک کی ترقی کا تصور ممکن ہوسکتا ہے ۔

First published: May 19, 2020 11:33 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading