உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    تمل فلم ’مرسیل‘ کے مکالموں پر بی جے پی کے اعتراض پر پی چدمبرم کو اعتراض

    سابق وزیر خزانہ اور کانگریس کے سینئر لیڈر پی چدمبرم: فائل فوٹو۔

    سابق وزیر خزانہ اور کانگریس کے سینئر لیڈر پی چدمبرم: فائل فوٹو۔

    نئی دہلی۔ کانگریس کے سینئر لیڈر پی چدمبرم نے تمل فلم ’مرسیل‘ کے مکالمات پر تنازعات کھڑا کرنے پر بی جے پی کی نکتہ چینی کی ہے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:

      نئی دہلی۔  کانگریس کے سینئر لیڈر پی چدمبرم نے تمل فلم ’مرسیل‘ کے مکالمات پر تنازعات کھڑا کرنے پر بی جے پی کی نکتہ چینی کی ہے۔ فلم میں گڈ ز اینڈ سروسز ٹیکس (جی ایس ٹی) کو تنقید کی زد میں لیا گیا ہے۔ مسٹر چدمبرم نے ٹوئٹ کیا ہے کہ ’’فلمسازوں کو نوٹس: قانون بن رہا ہے، آپ صرف ایسی دستاویزی فلمیں بنا سکتے ہیں جن میں سرکاری پالیسیوں کی تعریف کی گئی ہو‘‘۔ ایک دوسرے بلاگ والی سائٹ پر انہوں نے کہا کہ بی جے پی کا مطالبہ ہے کہ فلم مرسیل کے (متنازع) مکالمات حذف کئے جائیں، تصور کیجئے آج اگر ’پارا شکتی‘ ریلیز ہوئی ہوتی تو کیا ہوتا۔


      پارا شکتی (دی گوڈس) 1952 کی ہندوستانی تمل ڈرامہ فلم ہے جس کے ہدایت کار آر کرشنن اور ایس پنجو تھے۔ فلم اسٹار شیواجی گنیشن کی اداکاری والی یہ پہلی فلم تھی۔ اس فلم کے مکالمے ایم کروناندھی نے لکھے تھے جو بعد میں تمل ناڈو کے وزیراعلی بنے۔ اس فلم میں برہمنوں اور ہندوؤں کی روایات کو نشانہ بنایا گیا تھا۔

      First published: