ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

تیل کی قیمتیں ریکارڈ سطح پر، ممبئی میں 88 روپے سے اوپر پہنچا پٹرول

حکومت پٹرول اور ڈیژل کی قیمتوں میں کسی طرح کی کمی کرنے میں ناکام ثابت ہورہی ہے۔

  • Share this:
تیل کی قیمتیں ریکارڈ سطح پر، ممبئی میں 88 روپے سے اوپر پہنچا پٹرول
پٹرول اور ڈیژل کی قیمتوں میں مسلسل اضافہ۔


ملک میں پٹرول اورڈیژل کی قیمتیں کم ہونے کا نام ہی نہیں لے رہی ہیں۔ جمعہ کو دہلی میں پٹرول کی قیمت میں 28 پیسے کا اضافہ ہوا ہے  وہیں ڈیژل کی قیمت میں بھی 22 پیسے فی لیٹر کے حساب سے اضافہ ہوا ہے۔ دہلی میں جمعہ کو پٹرول کی قیمت 81.28  تو ڈیژل کی قیمت 73.30 روپے ہوگئی ہے۔ ان نئی قیمتوں کے ساتھ ڈیژل کی قیمت ایک بار پھر ریکارڈ سطح پر پہنچ گئی ہے۔

دوسری جانب اگر اقتصادی دارالحکومت ممبئی کی بات کریں تو یہاں میں پٹرول کی قیمت میں 28 پیسے اور ڈیژل کی قیمتوں میں 24 پیسے کا اضافہ ہوا۔ یہاں پٹرول 88.67 روپے فی لیٹراورڈیژل 77.82 روپے فی لیٹر ہوگیا ہے۔

پٹرول اورڈیژل کی قیمت مسلسل بڑھنے کی سب سے بڑی وجہ روپے کی قیمت میں مسلسل گراوٹ اور پوری دنیا میں کچے تیل کی قیمتوں میں اضافہ ہے۔ چونکہ ہندوستان اپنے کل تیل کا 80 فیصدی درآدمد کرنے والے ممالک میں تیسرے نمبر پر ہے، تو جیسے جیسے روپئے کی قیمت کم ہورہی ہے، امپورٹ مہنگا ہوتا جارہا ہے۔ ایسے میں پٹرول - ڈیژل کے رٹیل قیمت (جس پر انہیں خریدتے ہیں) بھی کچے تیل کی قیمتوں کے لحاظ سے اضافہ ہوتا جارہا ہے۔



امریکہ نے ایران پرجوہری تجربات کے سبب تجارتی پابندی عائد کررکھی ہے، ایسے میں ایران کے کچے تیل کی برآمدگی میں کمی آئی ہے۔ ایران تیل کا بڑا امپورٹر ملک ہے اور ہندوستان ایران کے تیل کا بڑا خریدارہے۔ عالمی سطح پر تیل کی فراہمی کم ہونے سے بھی اس کی قیمتوں میں اضافہ ہورہا ہے۔ ایران سے سب سے زیادہ تیل خریدنے والے ممالک میں ہندوستان دوسرے نمبر پرہے۔ پہلے نمبر پرچین ہے۔




First published: Sep 14, 2018 08:56 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading