ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

ہندوستان اور جاپان کی قربت کو دیکھ کرتلملايا چین ، دی یہ وارننگ

نئی دہلی :جاپان کے ساتھ کئی شعبوں میں ہندوستان نے تاریخی معاہدے کئے ہیں۔ لیکن ہندوستان اور جاپان کی اس دوستی سے چین بے چین ہو گیا ہے۔ چین کے سرکاری اخبار گلوبل ٹائمز نے ہندوستان کو خبردار کیا ہے کہ وہ جاپان کے ساتھ مل کر چین کے خلاف کوئی گول بندی نہ کرے۔

  • IBN7
  • Last Updated: Dec 13, 2015 12:19 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
ہندوستان اور جاپان کی قربت کو دیکھ کرتلملايا چین ، دی یہ وارننگ
نئی دہلی :جاپان کے ساتھ کئی شعبوں میں ہندوستان نے تاریخی معاہدے کئے ہیں۔ لیکن ہندوستان اور جاپان کی اس دوستی سے چین بے چین ہو گیا ہے۔ چین کے سرکاری اخبار گلوبل ٹائمز نے ہندوستان کو خبردار کیا ہے کہ وہ جاپان کے ساتھ مل کر چین کے خلاف کوئی گول بندی نہ کرے۔

نئی دہلی :جاپان کے ساتھ کئی شعبوں میں ہندوستان نے تاریخی معاہدے کئے ہیں۔ لیکن ہندوستان اور جاپان کی اس دوستی سے چین بے چین ہو گیا ہے۔ چین کے سرکاری اخبار گلوبل ٹائمز نے ہندوستان کو خبردار کیا ہے کہ وہ جاپان کے ساتھ مل کر چین کے خلاف کوئی گول بندی نہ کرے۔


عام طور پر چین کے سرکاری اخبار میں شائع مواد  حکومت کا ہی غیر رسمی موقف  سمجھا جاتا ہے۔ لیکن سوال یہ ہے کہ چین اس قربت سے کیوں ڈرا ہوا ہے؟ شنزو آبے نے پی ایم کو بلٹ ٹرین کی رفتار سے کام کرنے والا بتایا ہے، سوال یہ ہے کہ کیا مودی چین کے لئے بھی ثابت ہو رہے ہیں سفارت کاری کے بلٹ راجا ؟


وزیر اعظم مودی اور جاپان کے وزیر اعظم شنزو آبے وارانسی میں گنگا آرتی میں شامل ہوئے۔ دونوں ممالک کے مضبوط ہوتے تعلقات کی یہ عبارت چین کے لئے باعث تشویش بن گئی ہے۔


خیال رہے کہ 1962 کی جنگ میں چین نے جس طرح سے ہندوستان کے پیٹھ میں چھرا گھونپا تھا اسے کوئی بھی ہندوستانی بھلا نہیں سکتا ہے۔ ٹھیک اسی طرح سے دوسری جنگ عظیم میں جس طرح سے جاپانی افواج نے چین کو شکست دی تھی ، اسے بھی چین آج تک نہیں بھلا پایا ہے۔ تاریخ کی یہ عبارتیں ہندوستان ، چین اور جاپان کے تعلقات میں آج بھی اہمیت رکھتی ہیں۔


چین پاکستان کے ساتھ مل کر طویل مدت سے ہندوستان کی گھیرابندي کر رہا ہے، لیکن اب ہندوستان نے جاپان کے ساتھ تعلقات کا ایک نیا باب شروع کرکے چین کو براہ راست جواب دینے کی تیاری کر لی ہے۔


جاپانی وزیر اعظم شنزو آبے کے ہندوستان کے دورے کے دوران صرف اقتصادی اور تجارتی معاہدے ہی نہیں ہوئے ہیں بلکہ دفاع اور اسٹریٹجک ساجھیداری بھی ہوئی ہے۔ مثلا جاپان اب مالابار بحری مشق کا مستقل پارٹنر ہوگا۔ فوج کی سطح پر دونوں ملکوں نے تعلقات کو مضبوط کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ہندوستان کی دفاعی صنعت میں جاپان اب اہم پارٹنر ہوگا ۔ دونوں ملکوں نے متنازع جنوبی چین کے سمندر میں قابل قبول حل کی بھی وکالت کی۔

First published: Dec 13, 2015 12:19 AM IST