ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

Mann ki Baat: وزیر اعظم مودی نے کہا- لوکل کھلونوں کے لئے ووکل ہوجائیے، راہل گاندھی نے کی سخت تنقید

وزیر اعظم نریندر مودی (Narendra Modi) نے کہا، ’آتم نربھر بھارت’ (Aatma Nirbhar Bharat) کے لئے ہم سبھی کو مل کر کھلونے بنانا چاہئے۔ راہل گاندھی نے کیا کہ ’’جے ای ی - این ای ای ٹی میں بیٹھنے والے طلبہ چاہتے تھے کہ وزیراعظم امتحان پر چرچا کریں، لیکن وزیراعظم نے کھلونوں پر چرچا کی۔

  • UNI
  • Last Updated: Aug 30, 2020 03:39 PM IST
  • Share this:
Mann ki Baat: وزیر اعظم مودی نے کہا- لوکل کھلونوں کے لئے ووکل ہوجائیے، راہل گاندھی نے کی سخت تنقید
وزیر اعظم مودی نے من کی بات میں کہا- لوکل کھلونوں کے لئے ووکل ہوجائیے۔

نئی دہلی: وزیر اعظم نریندر مودی نے تاجروں سے دنیا بھرکی کھلونا مارکیٹ میں ہندوستان کا دبدبہ قائم کرنے کی اپیل کرتے ہوئے آج ملک کے باشندوں سے بھی کہا کہ وہ ملک کو خود انحصار بنانے کے لuے 'ووکل فار لوکل' کی مہم کے تحت دیسی کھلونے کو فروغ دیں۔ وزیر اعظم نے اپنے ماہانہ ریڈیو پروگرام 'من کی بات' میں کہا کہ دنیا میں سات لاکھ کروڑ روپے سے زیادہ کے کھلونوں کا بازار ہے اور اس میں ہمارا حصہ بہت کم ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس میں اپنا حصہ بڑھانے اور ملک کو کھلونوں کا مرکز بنانے کے لئے سب کو آگے آنا ہوگا۔ خاص طور پر نئے تاجروں سے اپیل کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ "کھلونوں سے ہم دو کام کرسکتے ہیں۔ اپنی زندگی میں اپنے شاندار ماضی کو زندہ کرسکتے ہیں اور اپنے سنہری مستقبل کوبھی سنوار سکتے ہیں۔ میں اپنے نئے کاروباری دوستوں سے کہتا ہوں کہ آئیے بطور ٹیم مل کر کھلونے بنائیں۔ اب وقت آگیا ہے کہ ہر شخص کو لوکل کھلونوں کے لئے ووکل ہونا چاہئے۔آئیے، ہم اپنے نوجوانوں کے لئے اچھے معیار کے کھلونے بناتے ہیں۔ کھلونا وہی ہونا چاہئے جس سے بچپن یاد آئے۔ ہم ایسے کھلونے بنائیں جو ماحول دوست بھی ہوں"۔

انہوں نے کہا کہ ملک میں مقامی کھلونے کی بہت ہی عمدہ روایت رہی ہے۔ بہت سے باصلاحیت اور ہنرمند کاریگر ہیں جو اچھے کھلونے بنانے میں مہارت رکھتے ہیں۔ کچھ علاقے کھلونے کے مراکز کی حیثیت سے بھی ترقی کر رہے ہیں، جیسے کرناٹک کے رام نگرم میں، آندھرا پردیش میں کونڈاپلی، تامل ناڈو میں تنجور، آسام میں دھوبری، اتر پردیش میں وارانسی۔ وزیر اعظم نے کہا کہ جو قوم ایسی وراثت، روایت، رنگارنگی، نوجوان آبادی رکھتی ہو، کیا وہ کھلونے کی مارکیٹ میں اپنا حصہ کم کرنا پسند کرے گی؟




وہیں دوسری جانب کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے کہا ہے کہ انجینئرنگ اور میڈیکل میں اینٹرینس ایگزام دینے وکے خواہش مند طلبہ وزیراعظم نریندرمودی کے ریڈیو پر نشر ’من کی بات ‘ پروگرام میں اس بار کھلونوں پر نہیں بلکہ جوائنٹ اینٹرنس ایگزام (جے ای ای) اور نیشنل ایلیجلیٹی اینٹرنس ٹیسٹ (این ای ای ٹی) پر بات چیت چاہتے تھے لیکن مسٹر مودی نے انہیں پوری طرح مایوس کیا ہے۔ راہل  گاندھی نے وزیراعظم کے من کی بات پروگرام کے نشر ہونے کے بعد اپنا ردعمل ظاہر کرتے ہوئے ٹویٹ کیا کہ ’’جے ای ی - این ای ای ٹی میں بیٹھنے والے طلبہ چاہتے تھے کہ وزیراعظم امتحان پر چرچہ کریں لیکن وزیراعظم نے کھلونوں پر چرچہ کی۔من کی بات نہیں طلبہ کی بات۔‘‘




راہل گاندھی نے ٹویٹ کیا کہ ’’جے ای ی - این ای ای ٹی میں بیٹھنے والے طلبہ چاہتے تھے کہ وزیراعظم امتحان پر چرچہ کریں لیکن وزیراعظم نے کھلونوں پر چرچہ کی۔من کی بات نہیں طلبہ کی بات۔‘‘
راہل گاندھی نے ٹویٹ کیا کہ ’’جے ای ی - این ای ای ٹی میں بیٹھنے والے طلبہ چاہتے تھے کہ وزیراعظم امتحان پر چرچہ کریں لیکن وزیراعظم نے کھلونوں پر چرچہ کی۔من کی بات نہیں طلبہ کی بات۔‘‘

واضح رہے کہ کانگریس جے ای ای اور نیٹ امتحانات کورونا کی وبا کے درمیان منعقد کرنے کے حکومت کے فیصلے کی مخالفت کررہی ہے۔ اس مسئلے پر کانگریس اقتدار اور اس کی حمایت والی چھ ریاستوں نے سپریم کورٹ میں امتحان ملتوی کرنے کے سلسلے میں نظر ثانی کی عرضی بھی دائر کی ہے۔ کانگریس صدر سونیا گاندھی نے بھی اس مسئلے پر اس سے پہلے غیر بی جےپی اقتدار والی ریاستوں کے وزرائے اعلی سے غور و خوض کیا تھا اور سبھی نے کورونا کی وبا اور اس کی وجہ سے جاری ٹرانسپورٹ کی عدم سہولیات کے پیش نظر یہ امتحان نہ کرانے کی اپیل حکومت سے کی تھی۔

Published by: Nisar Ahmad
First published: Aug 30, 2020 03:31 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading