اپنا ضلع منتخب کریں۔

    پی ایم مودی کا کانگریس پر نشانہ، 'رام کے وجود' کو نہیں ماننے والے اب راون کو لے آئے ہیں

    Youtube Video

    گجرات میں انتخابی مہم کے دوران ملیکارجن کھڑگے کے 'راون' کے طنز کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ کانگریس کے لیڈران میں یہ مقابلہ ہے کہ ان کے خلاف سب سے زیادہ توہین آمیز الفاظ کون استعمال کرے گا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | Gujarat
    • Share this:
      احمد آباد: وزیر اعظم نریندر مودی نے جمعرات کو گجرات میں انتخابی مہم کے دوران ملیکارجن کھڑگے کے 'راون' کے طنز کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ کانگریس کے لیڈران میں یہ مقابلہ ہے کہ ان کے خلاف سب سے زیادہ توہین آمیز الفاظ کون استعمال کرے گا۔  پی ایم نے بظاہر مدھوسودن مستری کے تبصرہ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا۔"کھڑگے سے پہلے، ایک اور کانگریسی لیڈر نے کہا تھا کہ پارٹی مودی کو ان کی 'اوقات' (جگہ) دکھائے گی،" کل رات احمد آباد شہر کے بہرام پورہ علاقے میں ملیکارجن کھڑگے  نے ایک ریلی سے خطاب کیا، جہاں انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم مودی تمام انتخابات میں اپنا چہرہ دیکھ کر لوگوں سے ووٹ دینے کو کہتے ہیں۔ انہوں  نے کہا تھا، 'کیا تم 100 سروں والے راون کی طرح ہو؟'

      جمعرات کو گجرات کے پنچ محل ضلع کے کلول قصبے میں ایک انتخابی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم مودی نے کہا، ’’کانگریس کے لیڈروں میں یہ مقابلہ ہے کہ کون میرے لیے زیادہ سے زیادہ قابل اعتراض الفاظ کا استعمال کرے گا۔ جو لوگ کبھی بھگوان رام کے وجود پر یقین نہیں رکھتے تھے، اب وہ رامائن سے (شیطان بادشاہ) راون لے آئے ہیں اور میں میں حیران ہوں کہ انہوں نے کبھی پچھتاوے یا پشیمانی کا اظہار نہیں کیا، میرے لیے ایسی گالیاں دینے کے بعد معافی مانگنے کی بات تو بھول ہی جایئے۔ کانگریس پارٹی کو رام سیتو سے بھی نفرت کرتی ہے۔ رام کے بھکت کو راون کہنا غلط ہے۔ یہ لوگ جتنی زیادہ کیچڑ پھینکیں گے، اتنا ہی کمل کھلے گا۔ وزیراعظم آج احمد آباد میں 50 کلومیٹر کا روڈ شو کریں گے، جو دوپہر 3:30 بجے شروع ہوگا اور چاند کھیڑا میں 9:45 بجے ختم ہوگا۔

      گجرات میں اب تک 19 فیصدی ووٹنگ، الیکشن کمیشن پر بھڑکی عآپ

       ڈیجیٹل روپئے کے آغاز سمیت آج سے ہوں  گی یہ اہم تبدیلیاں، جانیں آپ پر کیا پڑے گا اثر؟

       

      وزیر اعظم نے کہا- میں گجرات کا بیٹا ہوں۔
      وزیر اعظم مودی نے کہا، 'کچھ دن پہلے کانگریس کے ایک لیڈر نے کہا کہ مودی کتے کی موت مریں گے، دوسرے نے کہا کہ مودی ہٹلر کی موت مریں گے۔ کوئی راون کہتا ہے تو کوئی کاکروچ۔ گجرات نے مجھے جو طاقت دی ہے اس سے کانگریس پریشان ہے۔ کانگریس کے ایک لیڈر نے یہاں آکر کہا کہ ہم اس الیکشن میں مودی کو ان کی قابلیت دکھائیں گے۔ کانگریس نے محسوس کیا کہ مزید کہنے کی ضرورت ہے، اس لیے انہوں نے ملکارجن کھرگے کو یہاں بھیجا۔ میں کھڑگے جی کا احترام کرتا ہوں، لیکن انہوں نے وہی کہا ہوگا جو ان سے کہا گیا تھا۔ کانگریس یہ نہیں جانتی کہ گجرات رام بھکتوں کی ریاست ہے۔ یہاں آکر انہوں نے کہا کہ مودی 100 سروں والے راون ہیں۔ میں گجرات کا بیٹا ہوں۔ اس ریاست نے مجھے جو خوبیاں دی ہیں، جو طاقت دی ہے… میں ان کانگریسیوں کو اسی سے پریشان کر رہا ہوں۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: