ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

وزیر اعظم مودی نے لانچ کیا بھیم موبائل ایپ ، کہا : دنیا کے لئے ہوگا یہ ایک بڑا عجوبہ

وزیر اعظم نے دہلی کے تال کٹورا اسٹیڈیم میں ڈگی دھن میلے کا افتتاح کرتے ہوئے پہلا لکی ڈرا نکالا۔ اس دوران انہوں نے ایک نیا موبا ئل ایپ بھی لانچ کیا، جس کا نام بھیم رکھا گیا ہے

  • Pradesh18
  • Last Updated: Dec 30, 2016 05:00 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
وزیر اعظم مودی نے لانچ کیا بھیم موبائل ایپ ، کہا : دنیا کے لئے ہوگا یہ ایک بڑا عجوبہ
وزیر اعظم نے دہلی کے تال کٹورا اسٹیڈیم میں ڈگی دھن میلے کا افتتاح کرتے ہوئے پہلا لکی ڈرا نکالا۔ اس دوران انہوں نے ایک نیا موبا ئل ایپ بھی لانچ کیا، جس کا نام بھیم رکھا گیا ہے

نئی دہلی : وزیر اعظم مودی نے آج لکی ڈرا اسکیم اور ڈگی دھن اسکیم متعارف کرایا۔ وزیر اعظم نے دہلی کے تال کٹورا اسٹیڈیم میں ڈگی دھن میلے کا افتتاح کرتے ہوئے پہلا لکی ڈرا نکالا۔ اس دوران انہوں نے ایک نیا موبا ئل ایپ بھی لانچ کیا، جس کا نام بھیم رکھا گیا ہے۔ خاص بات یہ ہے کہ یہ ایپ انٹرنیٹ کے بغیر چلے گا۔

وزیر اعظم نےکہا کہ آنے والے وقت میں ملک کی پوری معیشت اسی بھیم اپلیکیشن کے ارد گرد ہو جائے گی۔ یہ بھیم ایپ دنیا کے لئے سب سے بڑا عجوبہ ہوگا۔ سارا کاروبار اسی اپلیکیشن کے ذریعے کیا جائے گا۔ یہ ایپ 2017 میں لوگوں کے لئے بڑا نذرانہ ہے۔ اب انگوٹھا ہی لوگوں کی شناخت ہو جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ لکی ڈر اسکیم کے تحت 100 دنوں تک لاکھوں کنبوں کی حوصلہ افزائی کی جائے گی ۔ ڈیجیٹل ادائیگی کرنے والے تابناک ہندوستان کی بنیاد مضبوط کرنے کا کام کر رہے ہیں۔ 14 اپریل کو بابا صاحب بھیم راؤ امبیڈکر کی سالگرہ پر میگا ڈرا نکالا جائے گا ، جس میں کروڑوں روپے کا انعام دیا جائے گا۔

ملک میں اس وقت 100 کروڑ سے زیادہ موبائل فونز ہیں۔ دنیا کے لوگ گوگل کے پاس جائیں گے اور پوچھیں گے کہ یہ بھیم ہے کیا؟ آغاز میں انہیں مہابھارت والا بھیم نظر آئے گا، مگر مزید سرچ کریں گے تو انہیں بھیم دکھایا جائے گا۔ وزیر اعظم نے مثال دیتے ہوئے کہا کہ یہ بھیم عام نہیں ہے۔ یہ آپ کے کنبہ کا اقتصادی سپر پاور بننے والا ہے۔

وزیر اعظم نے تین سال قبل کا ذکر کرتے ہوئے یو پی اے حکومت کی بھی تنقید کی۔ انہوں نے کہا کہ پہلے اخبارات میں خبریں چھپتی تھی کہ کوئلہ میں کتنا گیا، ٹو جی میں کتنا گیا اور آج لوگ کہتے ہیں کتنا آیا۔ آج پیسہ جانے کی نہیں آنے کی بات ہو رہی ہے۔ یہ تبدیلی ہے۔ ہندوستان تبدیلی کے لئے تیار ہے۔

First published: Dec 30, 2016 04:59 PM IST