ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

دہلی یونیورسٹی کی طالبہ کے ساتھ ڈی ٹی سی بس میں فحش حرکت کرنے والے کا پوسٹر جاری ، 25 ہزار کا انعام

دہلی یونیورسٹی کی طالبہ کے ساتھ ڈی ٹی سی بس میں چھیڑ چھاڑ اورفحش حرکت کرنے کے معاملہ میں پولیس نے ملزم کا پوسٹر جاری کیا ہے ۔

  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
دہلی یونیورسٹی کی طالبہ کے ساتھ ڈی ٹی سی بس میں فحش حرکت کرنے والے کا پوسٹر جاری ، 25 ہزار کا انعام
دہلی یونیورسٹی کی طالبہ کے ساتھ ڈی ٹی سی بس میں چھیڑ چھاڑ اورفحش حرکت کرنے کے معاملہ میں پولیس نے ملزم کا پوسٹر جاری کیا ہے ۔

نئی دہلی : دہلی یونیورسٹی کی طالبہ کے ساتھ ڈی ٹی سی بس میں چھیڑ چھاڑ اورفحش حرکت کرنے کے معاملہ میں پولیس نے ملزم کا پوسٹر جاری کیا ہے ۔ پولیس نے اس کے ساتھ ہی ملزم کا پتہ بتانے والے کو پچیس ہزار روپے کا انعام دینے کا بھی اعلان کیا ۔ خیال رہے کہ طالبہ کے ساتھ بس میں فحش حرکت کرنے کا یہ معاملہ سات فروری کو پیش آیا تھا ۔


طالبہ کا الزام ہے کہ وہ کالج سے اپنے گھر جارہی تھی تبھی وسنت وہار تھانہ علاقہ کے پاس یک ادھیڑ عمر کا شخص اس کی بغل والی سیٹ پر آکر بیٹھ گیا ۔ طالبہ کے مطابق وہ شخص تھوڑی دیر بعد اس کی کمر کو چھونے کی کوشش کرنے لگا اور جب اس نے مڑ کر دیکھا تو وہ فحش حرکت کر رہاتھا ۔


طالبہ کے طابق اس نے بس میں موجود لوگوں سے مدد کی فریاد کی ، لیکن وہاں موجود سبھی مسافر خاموش تماشائی بنے رہے ، تب اس نے موبائل سے اس شخص کا ویڈیا بنایا اور ٹویٹر پر ڈال دیا ۔ اس معاملہ کے سامنے آنے کے بعد خاتون کمیشن کی ٹیم نے اس طالبہ سے رابطہ کیا اور اسے پولیس کے پاس لے گئی ، جس کے بعد طالبہ کے بیان کی بنیاد پر گیارہ فروری کو آئی پی سی کی دفعہ تین سو چون اور دیگر مختلف دفعات کے تحت کیس درج کرلیا گیا ۔ تاہم ملزم فی الحال پولیس کی گرفت سے باہر ہے ۔

First published: Feb 17, 2018 10:38 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading