உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    چیف سکریٹری بدسلوکی کیس : دہلی پولیس نے منیش سسودیا سے تین گھنٹے میں پوچھے 125 سوالات

    دہلی کے چیف سکریٹری انشو پرکاش کےساتھ مبینہ ہاتھاپائی کے سلسلہ میں نائب وزیر اعلی منیش سسودیا سے جمعہ کو تقریبا تین گھنٹوں تک پوچھ گچھ کی گئی۔

    دہلی کے چیف سکریٹری انشو پرکاش کےساتھ مبینہ ہاتھاپائی کے سلسلہ میں نائب وزیر اعلی منیش سسودیا سے جمعہ کو تقریبا تین گھنٹوں تک پوچھ گچھ کی گئی۔

    دہلی کے چیف سکریٹری انشو پرکاش کےساتھ مبینہ ہاتھاپائی کے سلسلہ میں نائب وزیر اعلی منیش سسودیا سے جمعہ کو تقریبا تین گھنٹوں تک پوچھ گچھ کی گئی۔

    • Share this:
      نئی دہلی : دہلی کے چیف سکریٹری انشو پرکاش کےساتھ مبینہ ہاتھاپائی کے سلسلہ میں نائب وزیر اعلی منیش سسودیا سے جمعہ کو تقریبا تین گھنٹوں تک پوچھ گچھ کی گئی۔ ایڈیشنل ڈی سی پی ہریندر سنگھ کی قیادت میں ایک ٹیم کے ذریعہ سسودیا کے متھرا روڈ پر واقع سرکاری رہائش گاہ پر پوچھ گچھ کے بعد پولیس نے کہا کہ وہ نائب وزیر اعلی کے جواب سے مطمئن ہے اور اگر ضرورت پڑی تو ان سے دوبارہ پوچھ گچھ کی جائے گی۔
      انہوں نے بتایا کہ سسودیا سے تقریبا 125 سوالات پوچھے گئے ۔ سنگھ نے کہا کہ دہلی پولیس نے تقریبا 165 منٹ تک نائب وزیر اعلی سے پوچھ گچھ کی۔ ایک مرتبہ جب جانچ پوری ہوجائے گی تو حتمی رپورٹ تیار کی جائے گی۔ انہوں نے کچھ سوالوں کے جواب نہیں دئے اور ہماری تفتیشی ٹیم ان پر غور کرے گی۔ ابھی جانچ اہم موڑ پر ہے ۔ اگر ضرورت پڑی تو نائب وزیر اعلی سے دوبارہ پوچھ گچھ کی جائے گی۔
      پولیس نے بتایا کہ سسودیا نے پوچھ گچھ کے دوران دعوی کیا کہ میٹنگ کیجریوال نے بلائی تھی اور انہوں نے وہاں ممبران اسمبلی کو بھی بلانے کا فیصلہ کیا تھا۔ اس درمیان سسودیا کے وکیل نے کہا کہ دہلی پولیس نے تقریبا 60-70 سوالات پوچھے اور پولیس جواب سے پوری طرح مطمئن ہے۔ اس سے پہلے اس معاملہ میں وزیر اعلی اروند کیجریوال سے بھی پوچھ گچھ کی گئی تھی۔
      First published: