اپنا ضلع منتخب کریں۔

    آلودگی: راجدھانی میں پٹاخوں پر مکمل پابندی  نفاذ کیلئے تشکیل دی گئیں 408 ٹیمیں

    کل 408 ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔ ان ٹیموں میں 1289 ملازمین، افسران کو تعینات کیا گیا ہے جو دہلی میں پٹاخوں پر مکمل پابندی کو نافذ کرنے کے لیے کام کر رہے ہیں۔ اب تک پٹاخوں کی فروخت، ذخیرہ کرنے سے متعلق 188 خلاف ورزیوں کا پتہ چلا ہے اور تقریباً 2917 کلوگرام پٹاخے ضبط کیے گئے ہیں۔

    کل 408 ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔ ان ٹیموں میں 1289 ملازمین، افسران کو تعینات کیا گیا ہے جو دہلی میں پٹاخوں پر مکمل پابندی کو نافذ کرنے کے لیے کام کر رہے ہیں۔ اب تک پٹاخوں کی فروخت، ذخیرہ کرنے سے متعلق 188 خلاف ورزیوں کا پتہ چلا ہے اور تقریباً 2917 کلوگرام پٹاخے ضبط کیے گئے ہیں۔

    کل 408 ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔ ان ٹیموں میں 1289 ملازمین، افسران کو تعینات کیا گیا ہے جو دہلی میں پٹاخوں پر مکمل پابندی کو نافذ کرنے کے لیے کام کر رہے ہیں۔ اب تک پٹاخوں کی فروخت، ذخیرہ کرنے سے متعلق 188 خلاف ورزیوں کا پتہ چلا ہے اور تقریباً 2917 کلوگرام پٹاخے ضبط کیے گئے ہیں۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi, India
    • Share this:
    نئی دہلی: دہلی کے وزیر ماحولیات گوپال رائے نے کہا کہ پٹاخوں پر مکمل پابندی کو نافذ کرنے کے لیے 408 ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔ محکمہ ریونیو کی 165 ٹیمیں، دہلی پولیس کی 210 ٹیمیں اور ڈی پی سی سی کی 33 ٹیمیں مسلسل نگرانی کریں گی۔ اب تک 2917 کلو پٹاخے ضبط کیے جا چکے ہیں۔ عوام میں آگاہی پھیلانے کے لیے 21 اکتوبر سے ’’دیا جلاؤ پٹاخے‘‘ مہم شروع کی جائے گی۔ اس مہم کا آغاز سینٹرل پارک، کناٹ پلیس میں 51 ہزار دیے روشن کرکے کیا جائے گا۔ دہلی کے وزیر ماحولیات گوپال رائے نے آج پریس کانفرنس سے خطاب کیا۔ انہوں نے کہا کہ دیوالی کے موقع پر پٹاخوں سے ہونے والی آلودگی کی وجہ سے دہلی کی فضا بہت آلودہ ہو جاتی ہے اور یہ آلودگی بچوں اور بوڑھوں کے لیے بہت مہلک ہے اور اسی وجہ سے پٹاخوں کی تیاری، ذخیرہ، فروخت (آن لائن مارکیٹنگ)پلیٹ فارم کے ذریعے ترسیل سمیت) اور پٹاخے جلانے پر مکمل پابندی۔ پابندی کے نفاذ کے لیے 408 ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔ جس میں دہلی پولیس کے اے سی پی رینک کے افسران کی قیادت میں 210 ٹیمیں، محکمہ ریونیو کی 165 اور ڈی پی سی سی کی 33 ٹیمیں شامل ہیں۔

    دہلی میں مسلسل نگرانی کی جارہی ہے۔ گوپال رائے نے کہا کہ دہلی کے وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال نے سردیوں کے موسم میں دہلی میں آلودگی سے نمٹنے کے لیے 15 نکاتی سرمائی ایکشن پلان کا اعلان کیا ہے، جس پر حکومت مسلسل کام کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ دنوں مرکزی وزیر ماحولیات کے ساتھ ہوئی میٹنگ میں وہ پٹاخے کے تئیں پابند عہد ہیں ۔متعلقہ مسئلہ اٹھایا گیا اور آج بھی میں مرکزی وزیر ماحولیات سے گزارش کر رہا ہوں کہ جس طرح دہلی میں پٹاخوں پر مکمل پابندی ہے۔ اسی طرح این سی آر کی ریاستوں میں بھی پابندی لگائی جائے کیونکہ این سی آر میں جاری پٹاخوں کا اثر پڑتا ہے۔

    دہلی کی ہوا پر اور دیوالی کے آگےدن بہ دن دہلی والوں کو آنکھوں میں جلن اور سانس لینے میں دشواری کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دہلی میں پٹاخوں پر مکمل پابندی کو نافذ کرنے کے لیے دہلی پولیس، محکمہ محصولات اور ڈی پی سی سی کی ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔ کل 408 ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔ ان ٹیموں میں 1289 ملازمین/افسران کو تعینات کیا گیا ہے جو دہلی میں پٹاخوں پر مکمل پابندی کو نافذ کرنے کے لیے کام کر رہے ہیں۔ اب تک پٹاخوں کی فروخت/ ذخیرہ کرنے سے متعلق 188 خلاف ورزیوں کا پتہ چلا ہے اور تقریباً 2917 کلوگرام پٹاخے ضبط کیے گئے ہیں۔

    پٹاخوں کی مکمل پابندی (پیداوار/ذخیرہ/فروخت) کی خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف دھماکہ خیز ایکٹ کی دفعہ 9B کے تحت کارروائی کی جائے گی جس میں 5 ہزارجرمانہ اور 3 سال قید کا انتظام ہے اور پٹاخے جلانے والے شخص کو آئی پی سی کی دفعہ 268 کے تحت سزا دی جائے گی جس میں 200 روپے جرمانہ اور 6 ماہ قید کی سزا دی گئی ہے۔ وزیر ماحولیات گوپال رائے نے بتایا کہ محکمہ ماحولیات 21 اکتوبر کو سینٹرل پارک کناٹ پلیس میں پٹاخوں پر پابندی کے بارے میں عوام میں بیداری پھیلانے کے لیے ’’دیا جلاؤ پٹاخے‘‘ پروگرام کا انعقاد کر رہا ہے جس میں 51 ہزار دیے روشن کیے جائیں گے اور یہ مہم چلائی جائے گی۔ دیوالی تک عوام کی آگاہی جاری رہے گی۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: