ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

اروناچل میں صدر راج نافذ، کانگریس کی عرضی پر سپریم کورٹ میں سماعت آج

نئی دہلی۔ اروناچل میں صدر راج کو پرنب دا نے منظوری دے دی ہے، حکومت کے اقلیت میں آنے کے بعد مرکزی حکومت نے صدر راج کی سفارش کی تھی۔

  • IBN7
  • Last Updated: Jan 27, 2016 09:37 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
اروناچل میں صدر راج نافذ، کانگریس کی عرضی پر سپریم کورٹ میں سماعت آج
نئی دہلی۔ اروناچل میں صدر راج کو پرنب دا نے منظوری دے دی ہے، حکومت کے اقلیت میں آنے کے بعد مرکزی حکومت نے صدر راج کی سفارش کی تھی۔

نئی دہلی۔ اروناچل میں صدر راج کو پرنب دا نے منظوری دے دی ہے، حکومت کے اقلیت میں آنے کے بعد مرکزی حکومت نے صدر راج کی سفارش کی تھی۔ صدر راج لگائے جانے پر ریاست کے سابق وزیر اعلی نبام تکی نے مرکزی حکومت کے خلاف قانونی لڑائی لڑنے کا اعلان کیا ہے۔ کانگریس کی جانب سے داخل کردہ درخواست پر آج سپریم کورٹ میں سماعت ہوگی۔


کانگریس نے مرکزی کابینہ کی طرف سے اروناچل میں صدر راج لگانے کی سفارش کرنے کے فیصلے کو عدالت میں چیلنج کیا تھا۔ کانگریس اور بہت سی دوسری جماعتوں نے اس معاملے میں مرکز کے رویے کو جانبدارانہ قرار دیا ہے۔


ریاست میں صدر راج لگائے جانے کی سخت تنقید کرتے ہوئے کانگریس، جے ڈی یو، سی پی آئی اور عام آدمی پارٹی نے اسے جمہوریت کا 'قتل' قرار دیا اور بی جے پی کی زیرقیادت مرکزی حکومت پر ملک کی عدالت عظمی کو 'ذلیل' کرنے کا الزام لگایا جو اب معاملے کی سماعت کر رہی ہے۔

First published: Jan 27, 2016 09:37 AM IST