ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

پریشر گروپ آف مائنارٹیز کا مطالبہ ، کورونا قہر کے دوران نہ کی جائیں گرفتاریاں

پریشر گروپ آف مائنارٹیز کے صدر سید بلال نورانی کہتے ہیں کہ جس وقت حکومت کو پریشان حال اورغریب عوام ، مزدوروں ، لاچاروں اور بے روزگاروں کی مدد کرنی چاہئے تھی ، اس وقت ایک مخصوص فرقے کے لوگوں سے انتقام لیا جا رہا ہے ۔

  • Share this:
پریشر گروپ آف مائنارٹیز کا مطالبہ ، کورونا قہر کے دوران نہ کی جائیں گرفتاریاں
پریشر گروپ آف مائنارٹیز کا مطالبہ ، کورونا قہر کے دوران نہ کی جائیں گرفتاریاں

لکھنئو : کورونا کے بڑھتے قہرکے سبب مریضوں کی تعداد میں غیر معمولی اضافہ کے ساتھ حکومت کے رویوں اور انتظامیہ کے جبر کا عتاب بھی لوگوں پر مسلسل نازل ہو رہا ہے ۔ پریشر گروپ آف مائنارٹیز نے حکومت پر الزام عائد کیا ہے کہ موجودہ اقتدار میں ایک طویل عرصے سے مسلمانوں کو ہدف بنایا جا رہا ہے ۔ ابھی لوگ کورونا جیسی خطرناک وبا سے نبرد آزما ہیں ، کاروبار اور حصولِ معاش کے تمام وسائل تباہ ہوچکے ہیں اور ستم ظریفی یہ ہے کہ ایسے حالات میں ان ملزمین کی گرفتاریاں کی جارہی ہیں ، جن پر این آر سی اور سی اے اے کے خلاف مظاہروں کے دوران ماحول کو خراب کرنے اور تشدد بھڑکانے جیسے الزامات لگے ہیں ۔


پریشر گروپ آف مائنارٹیز کے صدر سید بلال نورانی کہتے ہیں کہ جس وقت حکومت کو پریشان حال اورغریب عوام ، مزدوروں ، لاچاروں اور بے روزگاروں کی مدد کرنی چاہئے تھی ، اس وقت ایک مخصوص فرقے کے لوگوں سے انتقام لیا جا رہا ہے ۔ پہلے دہلی میں این آر سی اور سی اے اے کے خلاف مظاہرہ کرنے والے ملزمین کی گرفتاریاں کی گئیں ، کورونا کے قہر کے دوران ان پر قانون کے ساتھ نفرت کا شکنجہ بھی کس دیا گیا ۔ اب اتر پردیش میں بھی وہی حکمت عملی اختیار کی جارہی ہے ۔ پہلے ملزمین سے جبراً وصولی کی فضا بنائی گئی ، انہیں نوٹس دئے گیے اور پھر ان کی گرفتاریاں شروع کردی گئیں ۔


یہ وقت ملک کے سبھی باشندوں کو ساتھ لے کر وبا سے لڑنے کا ہے ۔ ملک کو مالی دشواریوں سے نکالنے کا ہے ، کسی مخصوص جماعت یا مذہب کے لوگوں سے انتقام لینے کا نہیں ۔
یہ وقت ملک کے سبھی باشندوں کو ساتھ لے کر وبا سے لڑنے کا ہے ۔ ملک کو مالی دشواریوں سے نکالنے کا ہے ، کسی مخصوص جماعت یا مذہب کے لوگوں سے انتقام لینے کا نہیں ۔


بلال نورانی کہتے ہیں کہ ڈاکٹر کفیل کے معاملہ میں حکومت  نے قانونی ضابطوں کو بالائے طاق رکھتے ہوئے انہیں رہا نہیں کیا ۔ آج علی گڑھ سے فرحان زبیری کی گرفتاری  نے یہ ثابت کردیا کہ ارباب اقتدار کورونا کو تباہ کرنے سے زیادہ اقلیتی طبقہ کی تباہی میں دلچسپی رکھتے ہیں ۔ بلال نورانی نے کہا کہ پریشر گروپ کی جانب سے اس سلسلہ میں وزیر داخلہ اور وزیر دفاع کو خط لکھا جائے گا ۔ ساتھ ہی ساتھ وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ سے وقت لے کر گروپ کا ایک وفد ان کے سامنے اپنے مطالبات پیش کرے گا ۔

انہوں نے کہا کہ یہ وقت ملک کے سبھی باشندوں کو ساتھ لے کر وبا سے لڑنے کا ہے ۔ ملک کو مالی دشواریوں سے نکالنے کا ہے ، کسی مخصوص جماعت یا مذہب کے لوگوں سے انتقام لینے کا نہیں ۔ بلال نورانی نے ان تمام سیاسی جماعتوں اور اہم تنظیموں کے سربراہوں سے بھی اس ضمن میں آواز اٹھانے کی گزارش کی ہے ، جنہوں نے کسی مصلحت یا خوف کے سبب خود کو گھروں میں محفوظ کرکے سماج کے مظلوموں اور مزدوروں کو تنہا چھوڑ دیا ہے ۔

مسلم لیگ کے ریاستی صدر ڈاکٹر متین نے بھی وبا کے اس کربناک ماحول میں مظاہروں کے ملزمین کی گرفتاریوں کے خلاف آواز اٹھاتے ہوئے انہیں فوراً روکنے کا مطالبہ کیا ہے ۔
First published: May 31, 2020 07:06 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading