ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

دابھولکر کے قاتلوں کی گرفتاری کیلئے جنتر منتر پر زبردست احتجاج

دہلی : دہلی کے جنتر منترپر سماجی کارکنوں نے ڈاکٹر دابھولکر کے قاتلوں کی گرفتاری پر زور ڈالنے کیلئے زبردست مظاہرہ کیا۔ مظاہرین نے مرکزی حکومت اور اس وابستہ تنظیموں پر نئی فکر اور دانشورو ں کو دھمکائے جانے کا الزام بھی لگایا۔

  • ETV
  • Last Updated: Feb 12, 2016 10:43 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
دابھولکر کے قاتلوں کی گرفتاری کیلئے جنتر منتر پر زبردست احتجاج
دہلی : دہلی کے جنتر منترپر سماجی کارکنوں نے ڈاکٹر دابھولکر کے قاتلوں کی گرفتاری پر زور ڈالنے کیلئے زبردست مظاہرہ کیا۔ مظاہرین نے مرکزی حکومت اور اس وابستہ تنظیموں پر نئی فکر اور دانشورو ں کو دھمکائے جانے کا الزام بھی لگایا۔

نئی دہلی : دہلی کے جنتر منترپر سماجی کارکنوں نے ڈاکٹر دابھولکر کے قاتلوں کی گرفتاری پر زور ڈالنے کیلئے زبردست مظاہرہ کیا۔ مظاہرین نے مرکزی حکومت اور اس وابستہ تنظیموں پر نئی فکر اور دانشورو ں کو دھمکائے جانے کا الزام بھی لگایا۔


خیال رہے کہ ایم ایم کلبرگی ، ڈاکٹر دابھولکر اور کامریڈ پنسارے کے قتل پرحکومت نے خاموشی کو ہی بہتر سمجھا تھا ، لیکن جس طرح مہاراشٹر کے عوام جنتر منتر پہنچے ، اس سے ایک مرتبہ پھر سے حکومت کی سردردی میں اضافہ ہوسکتا ہے۔


عدم برداشت کے موضوع میں سرخیوں میں رہا ڈاکٹر دابھولکر کے قتل کا معاملہ ایک بار پھر سے گرم ہوگیا ہے ۔ مہاراشٹر سمیت کئی ریاستوں کی تنظیموں کے لوگ قاتلوں کی گرفتاری کا مطالبہ کرتے ہوئے ایک ساتھ جنتر منتر پر احتجاج کیا۔ انن شردھا انمولن سمیتی خواتین فیڈریشن سمیت نصف درجن تنظیموں سے وابستہ لوگوں کا مطالبہ تھا پونے میں دن دہاڑے قتل کئے گئے ڈاکٹر دابھولکر کے قاتلوں کو گرفتار کیا جائے۔


مظاہرین نے الزام لگایا کہ تحقیقات میں کوئی ربط نہیں ہے اور نہ ہی سیاسی پارٹیاں اور حکومت قاتلو ں کی گرفتاری پر توجہ دی جارہی ہے ۔احتجاج کے دوران سماجی کارکنوں نے ریاستی سرکاروں کے ساتھ ساتھ مرکزی حکومت کو بھی تنقید کا نشانہ بنا یا اور کہا کہ آج بھی دانشوروںاور توہم پرستی کے خلاف لڑنے والوں کو دھمکیاں مل رہی ہیں ۔

First published: Feb 12, 2016 10:43 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading